16 نومبر 2018
تازہ ترین
سام سنگ کا بالآخر بڑا اعلان

 ایک طویل انتظار کے بعد سام سنگ نے سکرین تہہ ہوجانے والے پہلے سمارٹ فون کی تفصیلات جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ اسی سال ریلیز ہوگا اور اس کی قیمت 1800 ڈالر سے شروع ہورہی ہے جو دو سے ڈھائی لاکھ روپے کے درمیان ہوگی۔ اس سے قبل آئی فون ایکس کو مہنگا ترین فون کہا جارہا تھا تاہم اب اس فولڈ ہوجانے والے سمارٹ فون کو گیلکسی ایکس کا نام دیا گیا ہے جس کے وسیع اور فولڈ ہوجانے والے لچکدار سکرین پر سام سنگ گزشتہ پانچ برسوں سے کام کررہا ہے اور اس کا کوڈ نیم  وِنر رکھا گیا ہے جو اس سال کے آخر میں ریلیز کیا جارہا ہے۔ جنوبی کوریا میں گولڈن برج انویسٹمنٹ میں تحقیقی کے سربراہ کِم جینگ ییول نے اس کی قیمت 1800 ڈالر کے قریب بتائی ہے تاہم مزید ڈیٹا اور گنجائش کے لیے قیمت اسی لحاظ سے زیادہ ہوگی۔ گیلکسی ایکس کی مزید تفصیلات جاری کرتے ہوئے سام سنگ نے کہا ہے کہ اس کا سکرین 7.3 انچ اوایل ای ڈی اسکرین ہوگا اور ڈیوائس فولڈ ہونے کے بعد اسکرین کا سائز ساڑھے چار انچ رہ جائے گا۔ سام سنگ نے اس نئے فون کے ماڈلز امریکہ اور یورپ میں سیل فون سروس کیریئر مثلاً اے ٹی اینڈ ٹی اور ٹی موبائلز وغیرہ کے نمائندوں کو ایک خفیہ ملاقات بھی پیش کیے ہیں۔ اب سام سنگ نے فولڈ سکرین فون کی مزید تصاویر بھی جاری کی ہے جس میں فون سکڑ  کر کتاب اور پھیل کر ٹیبلٹ بن جاتا ہے۔ استعمال نہ ہونے کے صورت میں چھوٹا یا سیکنڈری سکرین ٹچ پیڈ یا ننڈینڈو ڈی ایس گیم کی طرح استعمال ہوتا ہے۔ گیلکسی ایکس کی پیٹنٹ اپریل 2017 میں دی گئی تھی۔ پیٹنٹ تصاویر سے معلوم ہوا ہے کہ سام سنگ فولڈ ہونے والے ٹیبلٹ پر بھی کام کررہا ہے۔ تاہم سام سنگ نے یہ بھی کہا ہے کہ اس سال فولڈ ایبل سمارٹ فون جاری کرنے میں کئی مشکلات درپیش ہیں جن پر قابو پانے کی کوشش کی جارہی ہے۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟