26 ستمبر 2018
تازہ ترین
زمبابوے کا ناتجربہ کار پلیئرز پر انحصار 

  پاکستان سے ون ڈے سیریز میں زمبابوے کو ناتجربہ کار کرکٹرز پر انحصار کرنا پڑے گا،  جبکہ ڈیبیو کے منتظر3کھلاڑیوں کو 16رکنی سکواڈ میں شامل کرلیا گیا۔ تنخواہوں کی عدم ادائیگی پر بغاوت کرنے والے کرکٹرز اور انجریز نے زمبابوے کو مارچ میں ورلڈکپ کوالیفائرز میں شرکت کرنے والے سکواڈ میں کئی تبدیلیاں کرنے پر مجبور کر دیا ، برینڈن ٹیلر،سکندر رضا اور گریم کریمر کی خدمات حاصل نہیں۔ سولومن مائر کو ایڑی کی انجری کے سبب زیر غور نہیں لایا گیا، انہیں3ہفتے آرام کرنا ہوگا، کائیل جاروس سہ ملکی ٹی ٹوینٹی سیریز کے پہلے میچ میں انگوٹھا زخمی ہونے کے بعد ابھی تک صحتیاب نہیں ہوسکے، بائولر ڈیڑھ ماہ تک میدان سے باہر رہیں گے ، جبکہ سابق کپتان ایلٹن چگمبرا نومبر 2016کے بعد پہلی بار ون ڈے میچ کھیلنے کیلئے دستیاب ہونگے۔ انٹرنیشنل کیپ کے منتظر 3 کھلاڑی بھی منتخب ہوئے ہیں، انڈر19ٹیم کے سابق کپتان لیام روچی مڈل آرڈر بیٹسمین اور آف سپنر ہیں، انہوں نے شاندار آل رائونڈ صلاحیتوں کی بنیاد پر سکواڈ میں جگہ بنائی،23سالہ تناشے کامون ہکاموی ڈومیسٹک کرکٹ میں شاندار کارکردگی کے صلے میں منتخب ہوئے، وکٹ کیپر بیٹسمین ریان مرے بھی صرف 20سال کے ہیں، انہیں جنوری میں ون ڈے سکواڈ میں شامل کیا گیا تھا لیکن ڈیبیو کا موقع نہیں ملا، تعمیر نو سے گزرتی میزبان ٹیم ناتجربہ کار لیکن باصلاحیت کھلاڑیوں کی مدد سے پاکستان کو حیران کرنے کیلئے منصوبے بنا رہی ہے۔ زمبابوے کے منتخب سکواڈ میں برائن چاری،ٹنڈائی چتارا،چامو چھبابا، ایلٹن چگمبرا،ٹنڈائی چسورو،تناشے کامون ہکاموی، ہملٹن مساکیڈزا (کپتان)،ویلنگٹن مساکیڈزا، پیٹرمور، ریان مرے، ریان مرے،تریسائی مساکانڈا، بلیسنگ موزا ربانی،رچرڈ نگاراوا،لیام روچی، ڈونلڈ ٹریپانو اور میلکولم والر شامل ہیں۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟