29 ستمبر 2020
تازہ ترین
روس میں گھریلو تشدد کو جائز قرار دینے کیلئے قانون سازی

روس میں گھریلو تشدد کو جائز قرار دینے کیلئے قانون سازی

روس میں گھریلو تشدد کو جائز قرار دینے کیلئے قانون سازی کی جا رہی ہے۔ جسمانی تشدد روس میں ایک قابل سزا جرم ہے لیکن تقریباً 20 فیصد روسی کھلے عام یہ کہتے ہیں کہ ان کے خیال میں کبھی کبھار اپنی بیوی یا بچے کو جسمانی طور پر نشانہ بنانے میں کوئی حرج نہیں۔ روس کے ایوان زیریں ڈوما کا ایک پینل پہلے ہی اس بل کی ابتدائی منظوری دے چکا ہے جس میں گھریلو تشدد کو جرم قرار نہ دینے کا کہا گیا ہے۔ اگر یہ مسودہ قانون ڈوما میں بدھ کو دوسرے مرحلے میں بھی منظور کر لیا جاتا ہے تو تیسرے اور آخری مرحلے میں اس کی منظوری تقریباً یقینی ہے۔ ڈوما سے منظوری کے بعد یہ ایوان بالا میں بھیجا جائے گا جو عموماً ایوان زیریں کی منظور کردہ قانون سازی کو قبول کر لیا کرتا ہے۔ پارلیمان سے منظوری کے بعد یہ قانون صدر ولادیمر پوتن کو ارسال کر دیا جائے گا۔   


مزید خبریں

عوامی سروے

سوال: کیا آپ کووڈ 19 کے حوالے سے حکومتی اقدامات سے مطمئن ہیں؟