20 جولائی 2019
تازہ ترین
دھوئے جانے کے قابل برقی لباس تیار

دھوئے جانے کے قابل برقی لباس تیار

دنیا بھر میں برقی کپڑوں (الیکٹرانک ویئریبلز) لباس کی تیاری زور و شور سے جاری ہے۔ لیکن ایک جانب تو مسلسل بجلی فراہم کرنا مشکل ہوتا ہے تو دوسری جانب انہیں دھونا محال ہوتا ہے۔ یہ دونوں مسائل اب کوریائی ماہرین نے حل کر دیئے ہیں۔ برقی ڈسپلے والے لباس کو دھونے کی سہولت نہ ہونے سے ان کی تجارتی قدر صفر ہوجاتی ہے اور یہی وجہ ہے کہ یہ لباس اب بھی تجربہ گاہوں سے باہر نکل کر دکانوں تک نہیں پہنچ سکے ہیں۔ دی کوریا ایڈوانسڈ انسٹیٹیوٹ آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی (کے اے آئی ایس ٹی) کے ماہرین نے ایسا برقی لباس بنایا ہے جسے چلانے کے لئے باہر سے توانائی دینے کی ضرورت نہیں ہوتی اور اسے بار بار دھوکر کئی بار پہنا جاسکتا ہے۔ پروفیسر کیونگ کیول اور ان کی ٹیم نے برقی ڈسپلے والا ایک لباس بنایا ہے جس میں اصل کپڑے کا ریشہ اور ساتھ میں پالیمر(مصنوعی ریشے) سے بنے شمسی (سولر) سیل استعمال کئے ہیں اور ڈسپلے لئے آرگینک لائٹ ایمیٹنگ ڈائیوڈ (اوایل ای ڈی) لگائی گئی ہیں۔ اوایل ای ڈی جو توانائی استعمال کرتی ہیں وہ ملی واٹ میں ہیں اور اس لئے شمسی سیل کے دھاگوں سے آنے والی بجلی ان کے لئے بہت کافی ہوتی ہے۔ تاہم یہ نظام نمی سے شدید متاثر ہوکر بے کار ہوسکتا ہے یعنی ہلکی سی نمی لباس کے پورے الیکٹرانک کو شارٹ سرکٹ کرکے تباہ کرسکتی ہے۔ ماہرین نے اس کمی کو دور کرنے کیلئے اٹامک لیئر ڈیپوزیشن (اے ایل ڈی) اور سپن کوٹنگ جیسے جدید طریقے اپنائے ہیں۔ اس طرح سے پورے نظام پر ایک طرح کی واٹر پروف تہہ چڑھ جاتی ہے اور اب لباس کو 20 مرتبہ بھی دھویا جائے تب بھی اس کی او ایل ای ڈی اور برقی نظام خراب نہیں ہوتا۔ تجربات میں لباس کو بار بار موڑا اور نچوڑا بھی گیا لیکن الیکٹرانک نظام پر کوئی خاص فرق نہیں پڑا۔ دوسری جانب اس لباس سے بیرونی بیٹری کا بار بار چارجنگ کی کوئی ضرورت نہیں رہتی اور شمسی ریشوں سے یہ اپنے استعمال کی بجلی لیتا رہتا ہے۔


مزید خبریں

عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟