22 فروری 2019
تازہ ترین
 دلخراش تصاویر کیلئے حساس سکرین متعارف

سماجی رابطے کی ویب سائٹ انسٹاگرام نے دلخراش مناظر، غصیلی اور خود کو نقصان پہنچانے والے مواد کے پھیلائو کی روک تھام کے لئے نیا فیچر متعارف کرایا ۔  بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق انسٹاگرام نے برطانوی نوجوان لڑکی مولی رسل کی خودکشی کے بعد پوسٹ کی شیئرنگ کے لئے نئے  حساس سکرین متعارف کرایا۔ جس کا اعلان انسٹاگرام کے سربراہ ایڈم موسیری نے خود کیا۔ اس فیچر سے زخم، قتل، خودکشی اور دیگر دلخراش مناظر کی تصاویر کو دھندلا کر دیا جائے گا اور صرف خواہش مند صارفین کے بٹن دبانے پر ہی دستیاب ہوں گے۔ اس طرح پیج پر سکرولنگ کے دوران یہ مناظر اچانک سامنے نہیں آئیں گے۔ اس فیچر کے تحت ایسی تمام تصاویر کو بھی بلاک کر دیا جائے گا جس میں کوئی صارف خود کو نقصان پہنچاتا ہوا نظر آئے کم عمر نوجوانوں منفی اثر لیتے ہوئے خود کو نقصان نہ پہنچا لیں، جیسا کہ برطانیہ میں ایک واقعہ رپورٹ ہوا ہے۔ برطانوی نوجوان لڑکی مولی رسل کی خودکشی کا ذمہ دار والدین نے انسٹاگرام کو قرار دیتے ہوئے موقف اختیار کیا تھا کہ بیٹی نے انسٹاگرام پر ایک شخص کی تصاویر سے خودکشی کا طریقہ سیکھا تھا۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟