23 ستمبر 2018
تازہ ترین
جمناسٹک کے کرتب دکھانے والاروبوٹ

سائنس دان ایسا روبوٹ بنانے میں کامیاب ہو گئے ، جو فضا میں حیرت انگیز کرتب دکھا سکتا ہے۔ بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق سائنس دانوں نے فضا میں جمناسٹک کھلاڑی کی طرح قلابازیاں کھانے اور خطرناک اسٹنٹ دکھانے والا روبوٹ تیار کر لیا ۔ ڈزنی کمپنی اس پروجیکٹ پر دہائیوں سے کام کر رہی ہے جسے  سٹنٹرونکس کا نام دیا گیا ہے اور جو ڈزنی لینڈ پارک میں رکھا جائے گا۔ سائنسی جریدے ٹیک کرنچ  میں شائع ہونے والی رپورٹ کے مطابق سٹنٹرونکس دراصل ایک اور پراجیکٹ سٹک مین کی تیاری کے دوران پیدا ہوا۔ سٹک مین بھی فضا میں چھلانگیں لگانے کا کرتب دکھانے کے لئے بنایا گیا تاہم یہ صرف ایک چھڑی کی طرح تھا۔ سٹیک مین کی کامیابی سے ایسے انسانی شکل والے روبوٹ کا خیال پیدا ہوا جو فضا میں اچھلتا کودتا خطرناک کرتب دکھا سکے،  جسے صرف لوگوں کو محظوظ کرنے کے لئے نہیں بلکہ ہنگامی صورت حال میں امدادی کاموں میں استعمال کیا جاسکے۔ سٹنٹرونکس روبوٹ کو رواں برس ڈزنی لینڈ کے پارک میں رکھا جائے گا، جہاں وہ شائقین کو خطرناک کرتب دکھائے گا اور جو انسانوں سے زیادہ متحرک اور لچک دار ہو گا۔ یہ اپنے اہداف کو 100 فیصد تک حاصل کرنے میں کامیاب ہوجائے گا اور اس روبوٹ میں ماہر کھلاڑیوں کی بہ نسبت غلطی کا تناسب نہ ہونے کے برابر ہے۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟