15 نومبر 2018
بیریاں اورانگور پھیپھڑوں کیلئے نہایت مفید

 اپنے روزمرہ معمولات میں طرح طرح کی بیریاں اور انگور کھانے سے پھیپھڑے تندرست رہتے ہیں اور نظام تنفس کو قوت ملتی ہے۔ سائنسدانوں کے مطابق اینتھوسائننس نامی ایک فلیوینوئیڈ عمررسیدگی کے باوجود پھیپھڑوں کو بہترین حالت میں رکھتا ہے۔ یہ مرکب گہری رنگت کے پھلوں اور سبزیوں میں پایا جاتا ہے جن میں سرخ انگور، جامنی آلو، بلیو بیریز اور دیگر بیریاں شامل ہیں۔ یہ تحقیق جان ہاپکنز یونیورسٹی کی وینیسا گارشیا لارسن نے کی ہے۔ وہ کہتی ہیں کہ سبزیوں اور پھلوں سے بھرپور غذا پھیپھڑوں کو تندرست رکھتی ہے اور زندگی میں آگے چل کر ان سے وابستہ امراض سے بھی بچاتی ہے۔ ماہرین کہتے ہیں کہ 30 سال کے بعد پھیپھڑوں کی کارکردگی میں کمی ہونے لگتی ہے اور طرح طرح کے امراض پیدا ہوتے ہیں۔ اس ضمن میں پہلے سے غذائی تدابیر پھیھپڑوں کو توانا اور تندرست رکھتی ہیں۔ اسی بنا پر ماہرین نے شوخ اور گہرے رنگوں والی سبزیاں اور پھل کھانے پر زور دیا جن میں سرخ انگور اور بلیو بیری سرفہرست ہیں۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟