22 نومبر 2018
تازہ ترین
بڑھی صنعتوں کی پیداوار میں 6فیصد اضافہ  

  بڑی صنعتوں کی پیداوار میں سال 2017-18 کے ابتدائی 11ماہ  جولائی تا مئی کے دوران 6 فیصد کا اضافہ ہوا جس میں خوراک ومشروبات،  غیردھاتی معدنیات، آٹو، آئرن و سٹیل،  الیکٹرانکس، پیپر اینڈ بورڈ کے شعبوں کا نمایاں کردار رہا جبکہ ٹیکسٹائل سیکٹر کی پیداوار بھی بڑھی تاہم کیمیکل، فرٹیلائزر، لیدر اور لکڑی کی مصنوعات کے شعبے سکڑ گئے۔ پاکستان بیورو شماریات کی جانب سے جاری کردہ ماہانہ رپورٹ کے مطابق جولائی سے مئی تک ٹیکسٹائل سیکٹر کی پیداوار میں 0.38 فیصد کا اضافہ ہوا، کاٹن یارن اور سوتی کپڑے کی پیداوار میں معمولی اضافہ ہوا، خوراک مشروبات و تمباکو کی پیداوار میں 6.15 فیصد کا اضافہ ہوا، کھانے کے تیل کی پیداوار 20.65 فیصد بڑھی مگر گھی کی کم ہوگئی، چائے اور گندم کی پیداوار بھی بڑھی، کوک و پٹرولیم مصنوعات کی پیداوار میں 13.53فیصد کا اضافہ ہوا جس میں کیروسین اور لیبریکٹنگ آئل کو چھوڑ کر دیگر مصنوعات بشمول جیٹ فیول، موٹر  سپرٹ پٹرول ، ہائی سپیڈ ڈیزل اور فرنس آئل کی پیداوار میں اضافہ ہوا۔ رپورٹ کے مطابق فارما سیوٹیکلز کی پیداوار 1.65فیصد، غیر دھاتی معدنی مصنوعات بشمول سیمنٹ11.94 فیصد اور بسوں کے علاوہ آٹو موبائلز کی پیداوار میں 18.03فیصد کا اضافہ ہوا، آئرن و سٹیل کی پیداوار 22.02فیصد، الیکٹرونکس 36، پیپر اینڈ بورڈ8.28، انجینئرنگ پراڈکٹس 7.03 اور ربر  پراڈکٹس کی پیداوار میں 6.25 فیصد کا اضافہ ہوا تاہم مذکورہ 11ماہ کے اندر کیمیکلز0.71، کھاد 9.95 ، چمڑے کی مصنوعات 10.36 اور لکڑی کی پیداوار میں 36.27 فیصد کمی ہوئی۔  


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟