25 ستمبر 2018
تازہ ترین
آبی تنازعہ،پاکستان کے پکل ڈل اورلوئر کلنائی منصوبوں پر اعتراض برقرار

پاک بھارت آبی تنازعہ پر ہونے والے مذاکرات میں پاکستان نے بھارت کی جانب سے دریائے چناب پر تعمیر کیے جانے والے پکل ڈل اور لوئر کلنائی کے منصوبوں پر اعتراض بدستور برقرار رکھا ہے۔  نجی ٹی وی کے مطابق پاک بھارت آبی تنازعہ پر انڈس واٹر کمشنرز کے مابین وفود کی سطح پر مذاکرات کا پہلا دور ختم ہوگیا، دو روزہ مذاکرات کا پہلا دور نیسپاک ہیڈکوارٹر لاہور میں ہوا جس میں پاکستان انڈس واٹر کمشنر مہر علی شاہ نے پاکستانی ٹیم کی سربراہی کی جب کہ بھارتی وفد کی قیادت پی کے سیکسینا نے کی۔ مذاکرات کے پہلے دور میں پاکستانی حکام نے دریائے چناب پر بھارت کی جانب سے تعمیر کیے جانے والے پکل ڈل اور لوئر کلنائی پن بجلی  کے منصوبوں پر اعتراض برقرار رکھا۔ حکام کا کہنا تھا کہ پکل ڈل پن بجلی گھر کی جھیل بھرنے اور وہاں سے پانی چھوڑے کا پیٹرن بھی واضح کیا جائے۔ یہ سند ھ طاس معاہدے کا 115 واں اجلاس ہے، 2013سے اب تک ان منصوبوں پر مذاکرات کے سات راؤنڈ ہو چکے ہیں، مذاکرات کا دوسرا دور آج لاہور میں ہوگا۔

 


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟