21 ستمبر 2018
تازہ ترین
امریکا سے مذاکرات کیلئے تیار ہیں، ترک وزیر خارجہ

 وائٹ ہائوس نے امریکی پادری کی رہائی کے بدلے ترکی سے اقتصادی پابندیاں اٹھانے کی پیشکش کی ہے۔ ترک وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ دھمکیوں کا سلسلہ بند کریں تو مذاکرات کیلئے تیار ہیں۔امریکی ٹی وی کے مطابق وائٹ ہاؤس کی ترجمان نے کہا ہے کہ ترکی کا امریکی مصنوعات پر ٹیکس قابل افسوس ہے اور یہ غلط سمت میں ایک قدم ہے۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے امریکا کے پادری کو رہا نہ کرنے پر ترک وزیر انصاف اور وزیر داخلہ پر سفری پابندیاں عائد کرکے ان کے واشنگٹن میں اثاثے بھی منجمد کردیئے تھے۔جس کے جواب میں ترکی نے امریکی وزیر انصاف اور وزیر داخلہ پر سفری پابندی عائد کردی اور ان کے انقرہ میں اثاثے بھی منجمد کردیئے تھے۔ دوسری جانب ترکی نے امریکی ٹیکس کے جواب میں امریکی گاڑیوں اور دیگر اشیا پر ٹیکس عائد کرنے کا اعلان کیا تھا ۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟