23 ستمبر 2018
اسسٹنٹ کمشنر کی گاڑی کے قریب دھماکہ،3 لیویز اہلکار شہید

 بائی پاس پر اسسٹنٹ کمشنر کی گاڑی کے قریب دھماکے سے 3 لیویز اہلکار شہید ہوگئے۔ بلوچستان کے ضلع پشین میں بائی پاس کے قریب دھماکا ہوا جس سے ابتدائی طور پر 3 لیویز اہلکار کے شہید ہونے کی تصدیق ہوئی ہے جب کہ 2 شدید زخمی ہیں۔ پولیس کا کہنا ہے کہ دھماکا اسسٹنٹ کمشنر کی گاڑی کے قریب ہوا جو موٹرسائیکل کے ذریعے کیا گیا، دھماکا خیز مواد موٹرسائیکل میں نصب تھا جو اسسٹنٹ کمشنر کی گاڑی قریب آتے ہی زور دار دھماکے سے پھٹ گیا۔ پولیس کے مطابق دھماکے میں ایک گاڑی کو نقصان پہنچا ہے جب کہ دھماکے کے نتیجے میں زخمی ہونے والے 3 لیویز اہلکار شہید ہوگئے اور 2 شدید زخمی ہیں جنہیں طبی امداد کے لیے کوئٹہ منتقل کیا جارہا ہے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ دھماکے کے وقت اسسٹنٹ کمشنر گاڑی میں موجود نہیں تھے۔ دھماکے کے بعد پولیس اور لیویز کی بھاری نفری نے علاقے میں پہنچ کر جائے وقوعہ کو سیل کردیا جب کہ لیویز نے بھی سرچ آپریشن شروع کردیا ہے۔ پولیس کے مطابق دھماکا خودکش تھا یا ریموٹ کنٹرول کے ذریعے کیا گیا، اس کی نوعیت جاننے کے لیے بم ڈسپوزل سکواڈ کو طلب کرلیا گیا ہے۔ قریبی ہسپتال میں بھی ہائی الرٹ کردیا گیا ہے جب کہ پشین بائی پاس کو آمدو رفت کے لیے بند کردیا گیا ہے۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟