24 اپریل 2019
تازہ ترین
آئی ایم ایف نے پاکستانی معاشی حالات مزید خراب ہونے کا خدشہ ظاہر کر دیا

آئی ایم ایف نے پاکستانی معاشی حالات مزید خراب ہونے کا خدشہ ظاہر کر دیا

 بین الاقوامی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) نے بھی پاکستان کے معاشی حالات مزید خراب ہونے کا خدشہ ظاہر کر دیا ہے۔آئی ایم ایف نے ورلڈ اکنامک آؤٹ لک 2019ء جاری کر دیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ پاکستان کی اقتصادی ترقی کی رفتار میں کمی اور بے روزگاری میں اضافہ ہوگا۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ رواں مالی سال اقتصادی ترقی 2.9 فیصد جبکہ آئندہ سال 2.8 فیصد رہے گی۔ سال 2018ء میں پاکستان کی شرح نمو 5.2 فیصد تھی۔آئی ایم ایف رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ پاکستان کا بجٹ خسارہ 7.2 فیصد تک رہنے کا امکان جبکہ آئندہ سال مزید بڑھنے کا خدشہ ہے۔ رواں مالی سال کے دوران مہنگائی 6 فیصد ہدف کے برعکس 7.6 فیصد رہے گی۔ رپورٹ کے مطابق رواں مالی سال کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ5.2 فیصد اور آئندہ سال 4.3 فیصد رہے گا۔ رپورٹ رواں مالی سال بے روزگاری 6.1 فیصد اور آئندہ سال 6.2 فیصد رہے گی۔ اس لیے پاکستان کو معاشی اعشاریوں میں بہتری لانے کیلئے اقدامات اٹھانے کی ضرورت ہے۔


مزید خبریں

عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟