29 اکتوبر 2020
تازہ ترین

نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر نے شادی ہالز کے لیے نئی گائیڈ لائن جاری کر دیں

نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر نے شادی ہالز کے لیے نئی گائیڈ لائن جاری کر دی ہیں۔میرج ہالز میں انڈور تین سو سے زائد مہمانوں کی اجازت ہوگی۔جبکہ آؤٹ ڈور میں 500 مہمانوں کی اجازت ہوگی۔شادی ہالز میں تقریبات کا دورانیہ صرف دو گھنٹے ہوگا۔شادی ہال میں تقریبات کا وقت رات 10 بجے تک ہوگا۔ایس او پیز کی خلاف ورزی پر جرمانے کے ساتھ ساتھ ہال بھی سیل کردیئے جائیں گے۔   این سی او سی کے مطابق کورونا کے باعث دنیا بھر میں بڑے عوامی اجتماعات پر پابندی ہے۔بڑے عوامی اجتماعات کورونا وائرس کے پھیلاؤ کا سبب بنتے ہیں۔عوامی اجتماعات کے انعقاد سے متعلق مشاورت جاری ہے۔مشاورت کے بعد اماں میں استعمال سے متعلق فیصلے کیے جائیں گے۔   دوسری جانبشہر قائد میں چھ دن میں کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزیاں کرنے پر 12 شادی ہالز ، 193 ریسٹورنٹس، 23 دکانیں اور 4 تعلیمی اداروں کو سیل کردیا گیا۔   تفصیلات کے مطابق کراچی میں کوروناوائرس کے بڑھتے کیسز کے باعث شہر بھر میں ایس اوپیز کی خلاف ورزیاں کرنے والوں کے خلاف ایکشن تیزی سے جاری ہے ، چھ ڈسٹرکٹس میں مختلف ہوٹلز ، بازار ، دکانوں اور شادی ہولز کے خلاف کارروائی کی گئی۔ کارروائیو ں کے دوران کورونا ایس او پیز کو نظر انداز کرنے والوں کے خلاف جرمانے کیے گئے اور کئی جگہوں کو سیل کردیا گیا ، چھ دن کے دوران ایس او پیز کی خلاف ورزی کرنے والے 12 شادی ہالز کو سیل ، 5 کو جرمانے کیے گئے جبکہ 47 شادی ہالز کو فائنل وارننگ جاری کی گئی۔   انتظامیہ کے مطابق چھ دن کے دوران مختلف اضلاع میں 193 ریسٹورنٹس کو سیل کیا گیا ، خلاف ورزی کرنے پر 38 ریسٹورنٹس پر جرمانے اور 229 کو وارننگ جاری کی گئی جبکہ ایس او پیز پر عمل نہ کرنے پر 23 دکانوں کو سیل اور 10 کو جرمانے عائد کیے گئے۔ تعلیمی اداروں میں بھی ایس او پیز پر عمل نہ کرنے پر ایکشن لیتے ہوئے ضلع جنوبی میں 4 تعلیمی اداروں کو سیل کردیا گیا جبکہ ضلع غربی میں 9 ، ضلع ملیر میں 5 جبکہ ضلع کورنگی میں 2 تعلیمی اداروں کو وارننگ جاری کی گئی۔

نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر نے شادی ہالز کے لیے نئی گائیڈ لائن جاری کر دیں