25 اکتوبر 2020
تازہ ترین

چودھری برادران کیخلاف بیس برس پرانی نیب انکوائری بند

 نیب نے چوہدری برادران کے خلاف بنکوں سے نادہندگی کے الزام میں بیس برس پرانی انکوائری بند کردی ہے اور اس بارے میں رپورٹ لاہور ہائیکورٹ میں داخل کر دی ہے.     تفصیلات کے مطابق چودھری شجاعت علی اور چوہدری پرویزالہی نے دانستہ نادہندگی کے متعلق نیب انکوائری کے خلاف لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کیا اور اس انکوائری پر قانونی اعتراضات اٹھائے،  نیب کی رپورٹ میں لاہور ہائیکورٹ کو آگاہ کیا گیا کہ چودھری برادران کے خلاف دانستہ نادہندگی کا الزام ثابت نہیں ہوسکا۔ہدری برادران کے خلاف 12 اپریل 2000 میں آمدن سے زائد اثاثے بنانے، اختیارات کے ناجائز استعمال اور دانستہ نادہندگی کے الزام میں انکوائری شروع کی گئی تھی. نیب نے تین مختلف الزامات میں چودھری برادران کے انکوائری شروع کی،  نیب کے رپورٹ کے مطابق چودھری برادران کے خلاف دانستہ نادہندگی کا الزام چودھری برادران پر ثابت نہیں ہوسکا  اور اسی بنیاد پر چودھری برادران کے خلاف دانستہ نادہندگی کے الزام میں انکوائری کو بند کر دیا ہے.رپورٹ میں نیب نے استدعا کی کہ چودھری برادران کی دانستہ نادہندگی کے الزام میں انکوائری کے خلاف درخواست مسترد کی جائے.

چودھری برادران کیخلاف بیس برس پرانی نیب انکوائری بند