17 اگست 2017
تازہ ترین

عوامی سروے

سوال: آپ کے خیال میں کونسی سیاسی یا مذہبی جماعت صحیح معنوں میں نظریہ پاکستان کی محافظ اور عوامی فلاح و بہبود میں اہم کردار ادا کر سکتی ہے؟

سائنس اینڈ ٹیکنالوجی
  چین اور پاکستان معلوماتی راہداری قائم کرنے کیلئے سروس میکنزم مرتب  کرنے کیلئے سرگرمی سے مصروف کار ہے۔بیجنگ گوشوئر ٹیکنالوجی کمپنی کے جنرل منیجر جان لوئی نے جمعرات کو یہاں ایک انٹرویو میں بتایا کہ میکنزم کی تیار ی کی رفتار ٹھیک طریقے سے جارہی ہے، معلوماتی راہداری کے قیام کا اہم مقصد  صنعت و مواصلات کے تعاون کی بین الاقوامی استعداد کو فروغ دینا اور چینی کمپنیوں کی  اس بارے میں حوصلہ افزائی کرنا ہے کہ وہ انفارمیشن سیکٹر میں پاکستان اور دوسرے ممالک میں سرمایہ کاری کریں ، چین پاکستان انفارمیشن کوریڈور کا ڈویلپمنٹ بورڈ  بیلٹ وروڈ کے ساتھ ساٹھ سے ستر ممالک میں انفارمیشن کوریڈور کی تعمیر کیلئے قیمتی تجربہ فراہم کرے گا ،چین پاکستان  انفارمیشن کوریڈور کی ڈویلپمنٹ کا اہم مواد  ٴٴ4+1+1ٴٴجس کا مطلب یہ ہے کہ  چین پاکستان انفارمیشن پورٹل ، منصوبوں اور انویسٹمنٹ فنانسنگ کیلئے سروس پلیٹ فارم ، ماہرین کا تھنک ٹینک پلیٹ فارم ،ثقافت ، تعلیم اور تربیت کا پلیٹ فارم  کراس بارڈر ای ۔بزنس  کے قیام اور سکیورٹی سرٹیفکیشن کے پلیٹ فارم سمیت چار بنیادی پلیٹ فارم قائم کرنا ہے ۔جان لوئی نے کہا کہ یہ منصوبہ  بیلٹ و روڈ چین ۔ پاکستان اقتصادی راہداری سٹرٹیجک پلان کا حصہ ہے  ، اس بارے میں تجاویز  اور عملدرآمد پر چینی شہر ہائی کو یو میں منعقدہ تحقیق و ترقیاتی انٹرنیشنل اجلاس کے دوران غور و خوض کیا گیا ، چین اور پاکستان کے ماہرین کے تھنک ٹینک نے چین ۔پاکستان انفارمیشن کوریڈور کے قیام کی تجویز پیش کی جس کی تمام شرکائ نے تائید کی ، ڈائریکٹر ریسرچ و ڈویلپمنٹ انٹرنیشنل جان لوئی  کے مطابق جائو بائیگی نے اپنے وفد کے ہمراہ گذشتہ سال پاکستان کا اکیڈمک دورہ کیا جس کے دوران چین پاکستان انفارمیشن کوریڈ ور ، تعمیراتی عوامل ، تعاون اور تفویض کئے جانیوالے کام اور دیگر متعلقہ امور پر تفصیلی غورو خوض کیا گیا ،پاکستان اس منصوبے کو زبردست اہمیت دیتا ہے ، سابق وزیر اعظم نواز شریف نے نے جائو بائیکی سے ملاقات کی انہوں نے موخر الذکر کی رائے سے اتفاق کیا اور عملی جواب دیا ، انفارمیشن کوریڈور کی تعمیر سے متعلق کام  کی وزیر صنعت و انفارمیشن  ٹیکنالوجی لیائو شوئی کی طرف سے زبردست حمایت کی گئی ، انہوں نے اس سلسلے میں ضروری ہدایات بھی دیں ،2016ئ کے اوائل میں وزارت صنعت و انفارمیشن ٹیکنالوجی کے پلاننگ ڈیپارٹمنٹ نےٴٴ چین پاکستان انفارمیشن کوریڈور اور اس کے فلوٹ کا میکنزم کے بارے میں ایک جائزہ ٴٴ کے عنوان سے ریسرچ پراجیکٹ قائم کیا ، بعد ازاں ان کی کمپنی نے چینی کمپنیوں کو اس پر عمل کرنے میں مدد دینے  سے متعلق کام اور تحقیق کا کچھ حصہ مکمل کر لیا ۔

چالیس میگاواٹ کے ایک بہت بڑے تیرتے ہوئے شمسی فارم  نے مشرقی چین کے صوبہ  انہوئی کے کوئلے کی دولت سے مالا مال شہر  وائی نان نے بجلی پیدا کرنے شروع کر دی ہے، یہ فارم سالانہ قریباً 15ہزار گھروں کو بجلی  فراہم کر سکتا ہے جو کہ  کوئلے کی کان کنی کے معتدبہ علاقے کے پانی کی سطح پر 86ہیکٹر کے لگ بھگ  فلوٹس پر نصب 120000فٹ وولٹائیک پینلز سے زیادہ ہے ۔یہ بات سن گرو پاور سپلائی کمپنی لمٹیڈ کی  ذیلی کمپنی جو اس پراجیکٹ کو چلا رہی ہے نے بتائی ہے ۔ذیلی کمپنی کے ڈپٹی جنرل منیجر شیائو فوچن نے مقامی  میڈیا نمائندہ فاطمہ جاوید کو بتایا کہ یہ فلوٹس تہہ نشین علاقے جو کہ 400ہیکٹر ہے پر کنارے سے 200سے 300میٹر دور ہیں  تا کہ اس امر کو یقینی بنایا جائے کہ گرتے ہوئے پانی کی وجہ سے فارم پر اثرات مرتب نہ ہوں ۔شیائو نے کہا کہ سطح پر فلوٹس صرف پانی پر قائم رہتے ہیں اور حقیقت یہ ہے کہ تہہ پر ایک ہزار  سے زائد مضبوط کنکریٹ    کے ستون نصب کئے گئے ہیں ، اس فارم کی عمر 25سال ہے جو اس امر کا  متقاضی ہے کہ  اس فارم کو اس طریقے سے ڈیزائن کیا جانا چاہئے  تا کہ وہ از رفتہ عوامل کو برداشت کر سکے، مثلاً وزنی ، نمکیات  اور نمی  جو کہ پانی پرہونے کی وجہ سے  پیدا ہوتی ہے، فلوٹنگ سولر فارم کا یہ فائدہ ہے کہ وہ روایتی سولر فارم کے مقابلے میں کم ارضیاتی وسائل صرف نہیں کرتا ہے، ماحول کا تحفظ کرتا ہے اور مقامی ترقی کیلئے سود مند ہے  ۔شیائو نے کہا کہ ڈرونز طیارے فلوٹنگ سولر فارم پر گشت کرتے رہتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ڈرونز پٹرولرز ہیں اور وہ فوٹو اتارے اور نگرانی کرنے کیلئے پہلے موقع پر پہنچیں گے ۔
image

سعودی عرب میں پہاڑی علاقوں کے رہنے والوں نے غذائی مواد کو محفوظ رکھنے کا ایسا طریقہ اپنایا ہے جس نے جدید ٹکنالوجی کو بھی پیچھے چھوڑ دیا۔ سوشل میڈیا پر گردش میں آئے ہوئے ایک وڈیو کلپ میں بتایا گیا ہے کہ کھجور کو کس طرح 100 برس سے بھی زیادہ عرصے تک محفوظ رکھا جا سکتا ہے۔ تاہم معلومات کے حوالے سے مختلف حلقوں میں بحث مباحثے کا بازار گرم ہے،میڈیارپورٹس کے مطابق اس حوالے سے سعودی عرب کے شہر تبوک میں قدیم ورثے سے دل چسپی رکھنے والی ایک عمر رسیدہ شخصیت چچا ابراہیم بن عاصی نے بتایاکہ وڈیو میں نظر آنے والا انوکھے قسم کا بڑا سا ٹکڑا الشنہ کہلاتا ہے اور ہمارے آج کے دور میں یہ اپنی رونق کھو چکا ہے، الشنہ کو بکرے کی کھال سے بنایا جاتا ہے۔ اس کو پہلے دھو کر اور خشک کر کے پھر پانی میں گیلا کیا جاتا ہے تا کہ وہ لچک دار ہو جائے۔ اس کے بعد اس کے اندر کھجور رکھی جاتی ہے۔چچا ابراہیم نے مزید بتایا کہ الشنہ کے اندر کھجور کورکھنے کے بعد اسے کھجور کے پتوں سے بند کیا جاتا ہے۔ اس کے بعد ایک ہفتہ یا دو ہفتے یا پھر ایک ماہ تک دھوپ میں رکھا جاتا ہے تا کہ تمام شیرہ اْتر جائے۔ یہ کھجور کا نچوڑ شہد کی مانند ہوتا ہے۔ اس طرح کھجور الشنہ کے اندر 100 برس تک محفوظ رہتی ہے۔
image

فیس بک نے اپ ڈیٹ کرنے کیلئے کچھ بنیادی فیچرز کا انتخاب کیاہے، جو آئندہ چند دنوں یا ہفتوں میں فیس بک ایپ اور ویب سائٹ پرہوجائے گی،سب سے اہم تبدیلی پروفائل پکچر سے متعلق ہے، فیس بک نے انہیں نیوز فیڈ میں چکور کے بجائے گول ظاہر کرنے کا فیصلہ کیا ہے،گزشتہ جون میں سوشل میڈیا کی معروف ویب سائٹ ٹویٹر نے بھی یہ قدم اٹھایا تھا، فیس بک نے لائک بٹن میں بھی تبدیلی کی ہے، ساتھ ساتھ آئیکون کو بھی معمولی سا تبدیل کیا ہے،سوشل نیٹ ورک نے آئیکون کو بڑا اور دبانے کیلئے آسان بنا دیا ہے اور اب یہ مزید کالے رنگ میں نظر نہیں آئے گا،کمنٹ اور شیئر آئیکون جو پوسٹ کے نیچے ہوتے ہیں ان کے ساتھ بھی بالکل ایسی ہی تبدیل کی گئی ہے، کمنٹ تھریڈز میں بھی معمولی سی تبدیلی کی گئی ہے، جس میں پوسٹس گِرے ببلز کے ساتھ رُونما ہوں گے۔ لہٰذا یہ دیکھنا آسان ہوجائے گا کہ کس نے کس کو جواب دیا ہے۔، فیس بک کا کہنا ہے کہ انہوں نے لنک پری ویو کو بھی بڑا کردیا ہے اورپوسٹ کو دیکھنے کے بعد نیوز فیڈ پر واپس لوٹنا بھی آسان کردیا ہے۔ نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈا¶ن لوڈ کریں۔
image

تہران اور دوحہ میں بھارتی شہریوں کوچین کی ایک ٹیلی کام کمپنی نے ملازمت سے فارغ کر دیاہے۔ بھارتی ملازمین کی برطرفی کی وجہ چینی ٹیکنالوجی کی چوری اور چین بھارت سرحدی کشیدگی بتائی جارہی ہے، تاہم سرکاری سطح پر اس تصدیق نہیں کی گئی۔ بین الاقوامی میڈیا کے مطا بق تہران میں چینی ٹیلی کام کمپنی کے بھارتی ملازمین کو گزشتہ روز فوری نکالے جانے کے احکامات موصول ہوئے۔ قطر کے دارالحکومت دوحہ میں بھی بھارتی شہریوں کو چینی ٹیلی کام کمپنی سے فوری طور پر فارغ کردیا گیا ہے۔ ایران اور قطر میں چینی ٹیلی کام کمپنی سے بھارتی ملازمین کو نکالے جانے کی سرکاری طور پر تصدیق نہیں کی گئی۔ دیگرخلیجی ممالک سے بھی بھارتی ملازمین کو چینی ٹیلی کام کمپنی سے نکالنے کی اطلاعات ہیں۔
image

برلن دنیا کی پہلی ہائیڈروجن ٹرین بہت جلد منظر عام پرنظرآئے گیجو ماحول دوست اور کسی قسم کی گیسوں کا اخراج نہیں کرے گی۔ ہائڈریل نامی یہ ٹرین رواں برس دسمبر سے فعال کر دی جائے گی۔ پہلی ٹرین صرف 60 میل کا سفر کرے گی۔ اسے تیار کرنے والی نجی کمپنیوں کا کہنا ہے کہ وہ ماحول دوست سفری سہولیات کے شعبے میں اس شاندار کام کے آغاز سے بے حد خوش ہیں۔ ٹرین میں نصب کیا جانے والا سسٹم ہائیڈروجن اور آکسیجن کو ملا کر بجلی پیدا کرے گا اور یہی بجلی دراصل ٹرین کو چلائے گی۔ اس کا ہائیڈروجن سے بھرا ہوا ایک ٹینک 300 مسافروں کے ساتھ 500 میل تک کے سفر کے لیے کافی ہو گا۔ یہ ٹرین آلودگی پھیلانے اور ماحول کو تباہ کرنے والے ڈیزل سے چلنے والی ٹرینوں کا اختتام ثابت ہو گی۔ جرمنی میں اس وقت 4 ہزار سے زائد ٹرینیں ڈیزل پر چلائی جا رہی ہیں جو ماحول کو شدید آلودہ کرنے کا سبب بن رہی ہیں۔
image

  فلسطینی صدر محمود عباس نے سوشل میڈیا اور نیوز ویب سائٹس پر کنٹرول کی خاطر ایک حکم نامہ جاری کردیا ۔ ناقدین کے مطابق اس پیشرفت کے نتیجے میں ان کی حکومت کسی بھی فرد کو قومی یا سیاسی اتحاد کو نقصان پہنچانے کے الزام میں گرفتار کر سکے گی۔ ویسٹ بینک میں سوشل میڈیا اور ایسی نیوز ویب سائٹس بحث کا مرکزی پلیٹ فارم تصور کی جاتی ہیں۔ فلسطینی پراسیکیوٹر نے ایسے الزامات کو مسترد کر دیا ہے کہ یہ حکم نامہ سیاسی منحرفین کو نشانہ بنانے کی خاطر جاری کیا گیا ہے۔
image

 چین آئندہ دس برسوں کے دوران ایسا ملک بن جائے گا جہاں کسی کو لین دین کیلئے نقد رقم   جیب میں رکھنے کی ضرورت  نہیں ہو گی ، چین میں انٹرنیٹ استعمال کرنیوالے بیس فیصد سے زیادہ شہریوں کو یقین ہے کہ چین آئندہ دس برسوں کے دوران کیش لیس سوسائٹی بن جائے گا ۔ یہ  بات ایک رپورٹ میں بتائی گئی ہے جو مارکیٹ پر ریسرچ کرنیوالی فرم یوگوو نے جاری کی ہے  ،رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اس بات میں کوئی شک نہیں کہ چین اس وقت موبائل کے ذریعے ادائیگیاں کرنیوالے ممالک میں قائدانہ کردار کا حامل ہے ، اس کے شہری علاقوں کی اکثریت کے پاس سمارٹ فون ہیں جس کے ذریعے وہ ہر چیز کی ادائیگی کرسکتے ہیں ، اس سلسلے میں کئے گئے ایک سروے میں بتایا گیا ہے کہ اس سال موبائل کے ذریعے ادائیگی کرنے کی شرح میں بڑی تیزی سے اضافہ ہوا ہے جو 73فیصد تک جا پہنچی ہے، اس سے اندازہ ہوتا ہے کہ مستقبل میں چین کیش لیس سوسائٹی بن جائے گا ،  ایک حالیہ تجربے میں علی بابا نے کیش لیس سپر مارکیٹ بیجنگ میں اپنے صارفین کو یہ سہولت دی کہ وہ ادائیگی کا کوئی اور طریقہ استعمال نہ کریں بلکہ اپنے پھل اور سبزیوں کیلئے علی پے سے ادائیگی کریں ، چینی صارفین نے اس کا اچھا رد عمل  ظاہر کیا ہے۔  
image

ماہرین کی تحقیق کے مطا بق جہاں شہری علاقوں میں کوڑے کرکٹ سے بجلی بنا ئی جا رہی ہے اورکوڑے و کچر ے کو ٹھکا نے لگا نے کیلئے سالڈ ویسٹ مینجمنٹ ٹیکنالو جی اپنا ئی جا ر ہی ہے و ہیں دیہات میں جا نوروں کا گوبر اور کوڑا با ئیوگیس کیلئے استعما ل میں لا یا جاسکتا ہے اس ٹیکنالو جی سے چین او رجر منی 35سو میگا وا ٹ بجلی تیارکرنے کے یو نٹس کا میا بی سے چلا ر ہے ہیں،پاکستان میں بھی فصلوں کی با قیا ت سے سستی توانائی حاصل کر نے کے ز یا د ہ سے ز یا د ہ یونٹس لگائے جا ئیںاوراس ٹیکنالوجی کی بھرپورحوصلہ افزا ئی کی جا ئے کیو نکہ پا کستا ن فصلوں کی باقیا ت سے سستی اوروافر توانا ئی کے مو اقع مو جو د ہیں، ا س کے علا و ہ سستے ڈ یزل کی تیاری کیلئے جتروفاکی پنجا ب سند ھ بلوچستا ن کے سحرائی علاقوں میں و سیع پیما نے پر کا شت ممکن بنا ئی جا ئے تو ڈیزل کا درآمدی بل صفر تک آسکتا ہے ،ما ہر ین کے مطا بق جتروفا کے پو د ے سے حاصل شد ہ بائیوڈیزل ایک حقیقت ہے د نیا بھر میں ا س پو د ے سے متباد ل ا نرجی کیلئے تجربا ت کیے جا ر ہے ہیں جتروفا ایک صحرائی پو دا ہے جو ہر قسم کی ز مین میں قابل کا شت ہے ۔
image

 چین کی وزارت ٹرانسپورٹ  اور چینی کمپنیوں نے گذشتہ روز یہاں ایک معاہدے پر دستخط  کئے ہیں جس کا مقصد قاہرہ کے ارد گر د نئے اضلاع میں ہلکی ریل چلانے کیلئے ریلوے لائن بچھانا ہے، اس منصوبے پر 1.24ارب امریکی ڈالر خرچ ہوں گے،یہ تیز رفتار ٹرام 66کلومیٹر کا فاصلہ طے کر ے گی جس کے راستے میں گیارہ سٹیشن بنائے جائیں گے جن میں نئے دارالحکومت اور اضلاع کو آپس میں ملا دیا جائے گا ، تیز رفتار ٹرام گریٹر قاہرہ جس میں السالم سٹی ، رمضان 10سٹی ، اوبور سٹی ، بدر سٹی اور شوروک سٹی شامل ہوں گے ، اس سلسلے  میں یہاں ایک خصوصی تقریب منعقد ہوئی جس میں مصری نیشنل اتھارٹی برائے ٹنلز ٟاین اے ٹی ٞ اور چینی کمپنیوں کی مشترکہ اے وی آئی سی انٹرنیشنل اور چائنا ریلوے گروپ نے ایک معاہدے پر دستخط کئے ، تقریب میں مصر کے وزیراعظم شریف اسماعیل، وزیر ٹرانسپورٹ ہاشم عرفات  اور قاہرہ میں چین کے سفیر سانگ ایگو موجود تھے ، منصوبے دو سے تین ماہ کے دوران شروع کر دیا جائے گا  ، ٹرام کے ذریعے روزانہ 3لاکھ 40ہزار مسافر سفر کر سکیں گے جس سے قاہرہ اسماعیلیہ ہائی وے پر تیس فیصد ٹریفک کا رش کم ہو جائے گا اور اس سے مصرکو سالانہ 129.5ملین ڈالر کی بچت ہو گی ۔
image

میکسیکو میں سیاحوں کو شہر میں ہونیوالی کرپشن بس میں دکھانے کی سروس متعارف کرادی گئی ،غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق میکسیکو میں سیاحوں کو بس پر شہر میں ہونے والی کرپشن دکھائی جاتی ہے،میکسیکو میں شہریوں اور سیاحوں کو کرپٹر بسٴپر بیٹھا کر شہر میں ہونے والی کرپشن دکھائی جاتی ہے تاکہ ملک میں کرپشن کے مسئلے کو نمایاں کیا جا سکے۔
image

اگر آپ یہ سمجھتے ہیں کہ برتن صاف کرنے والا اسفنج محفوظ ہوتا ہے کیونکہ اسے روزانہ کئی بار دھویا جاتا ہے تو اپنی غلط فہمی دور کرلیجیے کیونکہ اس میں بیماریاں پھیلانے والے جراثیم کی سینکڑوں اقسام موجود ہوسکتی ہیں۔جرمن ماہرین نے انکشاف کیا ہے کہ باورچی خانوں میں برتن صاف کرنے کےلیے استعمال ہونے والے اسفنج میں 362 اقسام کے جراثیم وافر ہوتے ہیں جبکہ ان کی تین اقسام ایسی ہیں جو انسانی صحت اور جان کےلیے شدید طور پر نقصان دہ ہیں۔ فرٹ وینجن یونیورسٹی، جرمنی میں ماہرین نے مختلف مقامات سے استعمال شدہ کچن اسفنج (برتن دھونے والے اسفنج) کے 14 نمونے حاصل کیے اور ان کا جینیاتی تجزیہ کیا جس کا مقصد اسفنج کے نمونوں میں موجود جرثوموں کی اقسام کا تعین کرنا تھا۔تحقیق کے نگراں ڈاکٹر مارکس ایجرٹ کہتے ہیں کہ اگرچہ انہیں امید تھی کہ برتن دھونے والے اسفنج میں جراثیم موجود ہوں گے لیکن اتنی زیادہ اقسام کی اتنی بڑی تعداد میں موجودگی خود ان کےلیے حیران کن ہے۔تشویش ناک بات یہ سامنے آئی کہ برتن دھونے والے صاف ستھرے اسفنجوں میں بھی یہ جراثیم اسی طرح موجود تھے جیسے گندے اسفنجوں میں دیکھے گئے تھے۔ریسرچ جرنل ’’سائنٹفک رپورٹ‘‘ میں شائع شدہ اس تحقیق کے مصنفین نے خواتین کو مشورہ دیا ہے کہ وہ برتن دھونے والے اسفنج کی صفائی ستھرائی پر خصوصی توجہ دینے کے ساتھ ساتھ ہر ہفتے یہ اسفنج تبدیل کرلیا کریں تو اپنی اور اپنے اہلِ خانہ کی بہتر صحت کی ضمانت دے سکیں گی۔
image

ویسے تو کہنے کو پانچ سکینڈ کا وقت انتہائی قلیل سمجھا جاتا ہے اور پانچ سیکنڈز میں کوئی اہم کام ممکن دکھائی نہیں دیتا، مگر ایسا بھی نہیں،دنیا میں دسیوں ایسے امورہیں جو پانچ سکینڈز میں نمٹائے جاتے ہیں،امریکا کی ایک ویب سائیٹ نے پانچ سیکنڈز میں انجام پانے والے حیرت انگیز کاموں کی ایک فہرست جاری کی ہے، آئیے دیکھتے ہیں پانچ سکینڈز میں کیاکیا بڑے کام کیے جاتے ہیں،جرمنی اور امریکا کی سپر مارکیٹوں میں پانچ سیکنڈ کے وقت میں غذائی مواد اور مشروبات ختم ہو جاتی ہیں، جرمنی کی سپر مارکیٹ میں یہ مقدار 3.7 ٹن اور امریکا میں 4.5 ٹن غذائی مواد اور مشروبات فروخت ہو جاتے ہیں، پانچ سیکنڈز میں کوکا کولا کی 35 ہزار بوتلیں خالی ہوتی، 254 کپ کافی پی جاتی اور کھانے کے 20 ہزار پیکٹ خالی ہوجاتے ہیں،پانچ سکینڈ میں 12 گاڑیاں فروخت کی جاتی ہیں،امازون کمپنی کی 7 ہزار اشیا فروخت ہوتی ہیں اور جوتے تیار کرنے والی عالمی شہرت یافتہ کمپنی Nike تین ہزار سے زائد جوتے تیار کرتی ہے، پانچ سکینڈ میں دنیا بھر میں 9098 ٹن کوڑا کرکٹ جمع ہوتا ہے، پانچ سیکنڈ میں دنیا بھر کے جنگلوں میں 2.47 ایکڑ سے جنگلات ختم ہوتے ہیں اور اتنے ہی وقت میں سمندروں سے 80 ہزار ٹن بخارات پیدا ہوتے ہی، دنیا بھر میں پانچ سکینڈز میں ایک ہوائی جہاز ٹیک آف کرتا ہے، پانچ سیکنڈ میں صحرا میں 10.3 ایکڑ کا اضافہ ہوتا اور کائنات 45 میل وسیع ہوتی ہے، پانچ سیکنڈز میں فیس بک پر دو لاکھ 5 ہزار نئے مواد شامل کیے جاتے ہیں،ٹوئٹر پر 23 ہزار ٹویٹس جاری ہوتی ہیں، سنیپ چیٹ سے 8666 پیغامات جاری اور 17 ملین ای میل کی جاتی ہیں،دنیا بھر میں پانچ سکینڈز میں نو افراد فوت ہوتے، ایک بچہ بھوک سے لقمہ اجل بنتا اور 21 بچے پیدا ہوتے ہی، پانچ سیکنڈز میں کرہ ارض پر 500 بار بجلی گرتی اور 1.6 میل تک بادلوں کی گرج پہنچتی ہ،ہر پانچ سیکنڈ میں انسانی جسم میں موجود خلیوں میں 50 ہزار کیمیائی تعامل پیدا ہوتے ہیں۔
image

سمارٹ فون کو پاسپورٹ بنائیے، سیکنڈوں میںسمارٹ گیٹ امیگریشن سے چیک ان کر جائیے، دبئی ایئر پورٹ کے ٹرمینل تھری پر نئی سہولت متعارف کرادی گئی ۔دبئی انٹرنیشنل ایئرپورٹ سے روانہ ہونے والے مسافروں کیلئے نئی سہولت متعارف کرائی گئی ہے جس کے تحت مسافر اپنے پاسپورٹ کی بجائے سمارٹ فون استعمال کر سکیں گے۔نئے نظام کوا سمارٹ یو اے ای والیٹ کا نام دیا گیا ہے۔ نئی سہولت کے نتیجے میں روانگی کیلئے کلیئرنس کا دورانیہ 9 سے 12 سیکنڈ فی مسافر کم ہو سکے گا۔حکام کے مطابق نئے نظام سے مسافر اپنا وقت بچا سکیں گے اور قیمتی دستاویزات کو محفوظ رکھ سکیں گے
image

سعودی عرب میں حجاج کرام کے لیے ایئر کنڈیشنڈ چھتری متعارف کرادی گئی ہے، حجاج سخت گرمی میں خود کو تھکاوٹ سے محفوظ رکھ سکیں گے ۔سعودی عرب کی ایک کمپنی نے حج سے قبل یہ چھتری مارکیٹ میں لانے کا پروگرام بنالیا ہے۔چھتری میں پنکھے اور پانی کی پھوار کا انتظام کیا گیا ہے جس سے سخت گرم موسم میں ٹھنڈک کا احساس ہوتا ہے۔چھتری کی بیٹری مسلسل 8گھنٹے تک کام کرتی ہے جس کے بعد اسے دوبارہ چارج کیا جاسکتا ہے۔
image

  اگرچہ روزانہ کار میں سفر اندر بیٹھے لوگوں کیلئے زیادہ ضرر رساں نہیں ہوتا لیکن پھر بھی کار سوار لوگ فضائی آلودگی سے متاثر ہوتے ہیں۔ اب سائنسدانوں نے ایک تحقیق کے بعد رپورٹ میں کہا ہے کہ کار کے اندر آلودگی کم کرنے کا طریقہ تلاش کرلیا گیا ہے جو انتہائی سادہ ہے۔ انکا کہناتھا کہ اگر ایئرکنڈیشن چلا دیا جائے تو اس سے کار کے اندر 34فیصد تک فضائی آلودگی ختم ہوسکتی ہے۔ واشنگٹن یونیورسٹی کے محققین کا کہنا ہے کہ کار چلانے کی اپنی عادتوں میں ذرا سی تبدیلی کرکے آپ گاڑی میں آلودگی کم کرسکتے ہیں۔ اس تحقیقی ٹیم کی قائد کا کہنا تھا کہ ٹریفک کی گنجانی میں آلودگی بڑھ جاتی ہے جس سے گاڑیوں میں بیٹھے لوگ بہت زیادہ متاثر ہوتے ہیں۔ انہوں نے کار کے باہر اور اندرونی آلودگی کو مانیٹر کیا جس کے بعد اپنی رپورٹ تحریر کی۔
image

واٹس ایپ نے  صارفین کے لئے نیا فیچرمتعارف کرادیا ، اب واٹس ایپ صارفین اپنے اسٹیٹس کو رنگین بیک گراونڈ کے ساتھ اپڈیٹ کر سکتے ہیں۔یہ فیچر فیس بک پر استعمال کیا جاتا ہے لیکن جلد ہی یہ واٹس ایپ صارفین کے لئے بھی جاری کردیا جائے گا۔اسٹیٹس میں رنگین بیک گراونڈ ڈالنے کے لئے صارفین اسٹیٹس لکھ کر اسکرین پر نمایاں ہونے والی پینسل آئی کون پر کلک کریں گے جو دائیں جانب نیچے نمایاں ہوگا۔واٹس ایپ کا اسٹیٹس بیک گراونڈ فیچر کو ابتدائی طور پر کچھ صارفین کے ساتھ ٹیسٹ کیا گیا ہے تاہم جلد ہی اس فیچر کو دنیا بھر کے صارفین استعمال کر سکیں گے۔
image

طبی ماہرین نے کہا ہے کہ منرل واٹر کی بوتلیں آپ کے دانت تباہ کررہی ہیں۔حالیہ تحقیق کے مطابق ماہرین نے کہا کہ انھوں نے مشہور و معروف برانڈ کے پانی کی بوتلوں پر تحقیق کی ہے، بعض برانڈز میں تو نقصان پہنچانے والا pH لیول بہت زیادہ تھا اور فلورائڈ کی ناکافی تعداد پائی گئی۔ڈاکٹروں کے مطابق ایسا پانی جس میں زیادہ ایسڈ ہو پینا دانتوں کیلئے خطرناک ہے۔اگر pHلیول زیادہ ہو تو ہمارے دانتوں کی اوپری سطح جھڑنے لگتی ہے اس لئے احتیاط کی ضرورت ہے۔
image

سمندری طوفان اس وقت بنتے ہیں جب کسی ایک علاقے میں ہوا کا درجہ حرارت نزدیکی علاقے کے درجہ حرارت سے مختلف ہوجاتا ہے۔ گرم ہوا سطحِ آب سے بلند ہونے لگتی ہے جب کہ سرد ہوا نیچے کا رخ کرتی ہے ، اور یوں، ماحولیاتی دباؤ میں فرق آجاتا ہےگذشتہ دِنوں امریکہ اور ایشیا میں شدید سمندری طوفان آئے۔ بڑے پیمانے پر جانی اور مالی نقصان بھی ہوا۔بحرِ ہند کے اوپر ڈولپ ہونے والے طوفانوں کوسائکلون کہتے ہیں، شمال مشرقی بحر الکاہل پر بننے والے طوفان ٹائفون کہلاتے ہیں، جب کہ مشرقی بحر الکاہل اور بحیرہٴاوقیانوس کے اوپر بننے والےطوفانوں کو ہریکینزکا نام دیا جاتا ہے۔اِن قدرتی آفات کو صدیوں سے انسانی نام دیے جاتے ہیں۔ آسٹریلیا کے ایک سائنس داں نے انیسویں صدی کے اختتام سے قبل اِن طوفانوں کو عورتوں کا نام دینا شروع کیا اور امریکہ میں ماہرینِ موسمیات نے 1953ء میں طوفانوں کے لیے خواتین کا نام استعمال کرنا شروع کردیا۔ لیکن، 1979 میں مردوں کا نام بھی استعمال کیا جانے لگا۔سمندری طوفان اس وقت بنتے ہیں جب کسی ایک علاقے میں ہوا کا درجہ حرارت نزدیکی علاقے کے درجہ حرارت سے مختلف ہوجاتا ہے۔ گرم ہوا سطحِ آب سے بلند ہونے لگتی ہے جب کہ سرد ہوا نیچے کا رخ کرتی ہے ، اور یوں، ماحولیاتی دباؤ میں فرق آجاتا ہے۔اگر دباؤ بڑے علاقے کے اوپر تبدیل ہوتا ہے تو ہوائیں ایک بڑے دائرے کی شکل میں چلنے لگتی ہیں۔زیادہ دباؤ والی ہوا کم دباؤ والے مرکز کی طرف کھچنے لگتی ہے۔ گہرے بادل بنتے ہیں اور شدید بارش ہوتی ہے۔
image

    واشنگٹن میں ماہرین نے لیبارٹری میں نینوگیلوانک المونیم پاؤڈر کو پانی میں ڈالا تو تیزی سے بلبلے خارج ہونے لگے۔ معلوم ہوا کہ پاؤڈر سے آب پاشیدگی (ہائیڈرولائیسِس) کا عمل شروع ہوگیا تھا یعنی پانی ہائیڈروجن اور آکسیجن کے ایٹموں میں تقسیم ہونے لگا۔ اگرچہ المونیم کے متعلق ہم پہلے سے جانتے ہیں کہ یہ آب پاشیدگی کرتا ہے لیکن اس ری ایکشن کو ممکن بنانے کے لیے اس میں کوئی نہ کوئی اضافی عمل انگیز (کیٹالسٹ) ملانا پڑتا ہے۔ تاہم نینومٹیریل سے یہ کام آسان اور تیز رفتار ہوگیا ہے۔یہ عمل اتنا تیز اور بہتر ہے کہ ایک کلوگرام المونیم پاؤڈر سے 220 کلوواٹ بجلی بنائی جاسکتی ہے اور وہ بھی صرف تین منٹ میں اور اس سے بہت سے برقی آلات چلائے جاسکتے ہیں۔ابتدائی ٹیسٹ میں اس سے ایک ماڈل ٹینک کو چلایا گیا جس سے اس کی افادیت ثابت ہوچکی ہے۔ بجلی بنانے والے جادوئی پاؤڈر سے پانی میں شامل ہائیڈروجن الگ کرکے اس ہائیڈروجن کو توانائی کے حصول میں استعمال کیا جاتا ہے۔ عسکری ماہرین کے مطابق سفوف کو کئی کاموں میں استعمال کیا جاسکتا ہے۔ مثلاً مشن مکمل کرکے ازخود تباہ ہوجانے والے تھری ڈی پرنٹڈ ڈرونز اور روبوٹس کے علاوہ فوجیوں کے زیرِاستعمال رابطہ آلات بھی چلائے جاسکتے ہیں۔
image

جو بچے سمارٹ فونز اور ٹیبلٹس کے ساتھ کھیلنے میں زیادہ وقت لگاتے ہیں وہ دوسرے بچوں کی نسبت کم سوتے ہیں،سائنٹیفک رپورٹس میں شائع ہونے والے تحقیق کے مطابق ایسے بچوں میں ٹچ سکرین پر گزارا ہوا ہر ایک گھنٹہ ان کی 15 منٹ کی یومیہ نیند میں کمی کا باعث بنتا ہے تاہم ٹچ سکرین کے ساتھ کھیلنے والے بچوں کی متحرک صلاحتیں نسبتاً جلد اجاگر ہوتی ہیں،ماہرین کا کہنا ہے کہ والدین کو اس کے بدلے نیند کو قربان نہیں ہونے دینا چاہئے۔ ان کے بقول گھروں میں ایسی ٹچ سکرینز کے معاملے میں گویا ایک بھونچال سا آیا ہوا ہے لیکن لوگ اس کی وجہ سے بچوں کے اوائل عمری میں نشوونما پر پڑے والے اثرات سے انجان ہیں،لندن کر برکبیک یونیورسٹی کی جانب سے کی گئی تحقیق میں تین سال تک کے 715 بچوں کے والدین سے سوالات کیے گئے،اس میں پوچھا گیا کہ ان کا بچہ سمارٹ فون یا ٹیبلٹ کے ساتھ کتنی دیر تک کھیلتا ہے اور اس کے سونے کے اوقات کیا ہیں،مطالعے سے پتا چلا کہ 75 فیصد ننھے بچے ٹچ سکرین روزانہ استعمال کرتے ہیں، ان میں چھ سے 11 ماہ کی عمر کے بچوں کا 51 فیصد اور 25 سے 36 ماہ کے عرصے کے بچوں میں 92 فیصد ایسا کرتے ہیں تاہم ٹچ سکرینز کے ساتھ کھیلنے والے بچے رات میں کم اور دن میں زیادہ سوتے ہیں،مجموعی طور پر ٹچ سکرین کے ساتھ گزارے ہوئے ہر ایک گھنٹے کے بدلے ان کی نیند کے 15 منٹ کم ہو جاتے ہیں
image

  چین نے ایک نئی مقناطیسی ٹرین تیار کر لی ہے جس کو گذشتہ روز شنگھائی میں آزمائش کی بھی کی گئی ، توقع ہے کہ یہ ٹرین ایک سال میں مارکیٹ میں آ جائے گی ، نئی مقناطیسی ٹرین پر تحقیق اور تیاری کا کام آٹھ سال قبل شروع کیا گیا تھا اور گذشتہ روز اس کے  کامیاب آزمائشی  تجربے سے ظاہر ہو گیا ہے کہ چین نئی نسل کی مقناطیسی اورجدید ترین ٹیکنالوجی میں شامل ہو گیا ہے ۔یہ بات سی آر آر سی ڈالیان کے چیف انجینئر کو ٹیان گوئی نے  گذشتہ روز بتائی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ مقناطیسی ٹرین کو آزمائشی طورپر شنگھائی میں 120کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے چلایا گیا ، یہ نئی درمیانی سے کم سپیڈ رکھنے والی ٹرین روایتی ریل نظام کے مقابلے میں کم آواز ، تیز رفتار اور زیادہ عرصے تک خدمات انجام دینے والی ٹرین ہے ، اس مقناطیسی ٹرین کی پٹڑی پر آنیوالی لاگت شہری ہلکی ریل سے زیادہ ہے لیکن میٹرولائن سے کم ہے ، چین میں پہلی درمیانی سے کم سپیڈ رکھنے والی مقناطیسی ریل لائن نے مئی 2016ئ میں چین کے مرکزی صوبے ہونان کے شہر چنگ شا میں کام شروع کیا تھا ، چین دنیا میں پہلا ملک ہے جو اس طرح کی ٹیکنالوجی استعمال کررہا ہے، چینی اکیڈیمی  آف انجنیئرنگ  کی تحقیقات سے پتہ چلتا ہے کہ چین 2020ئ تک 5سے زیادہ درمیانی سے کم سپیڈ رکھنے والی مقناطیسی ریل لائن تجارتی مقاصد کے لئے استعمال کرے گا ، اس قسم کے منصوبوں کیلئے 10شہر زیر غور ہیں ۔
image

اسمارٹ فونز اور سوشل میڈیا کے اس دور میں جہاں دیگر تصاویر شیئر کرنے کے رجحان میں تیزی ہوئی ہے، وہیں سیلفی کا بخار بھی سر چڑھ کر بولنے لگا ہے۔تاہم کئی لوگ ایسے ہیں، جن کے کیمرے کا رزلٹ صحیح نہ ہونے کی وجہ سے ان کی سیلفی اچھی نہیں آتی۔لیکن متعدد لوگ ایسے بھی ہیں، جن کے پاس اچھے موبائل ہونے کے باوجود انہیں اچھی سیلفی کھینچنا نہیں آتی،اب اس مسئلے کو حل کرنے کے لیے گوگل میدان میں آچکا ہے، اور کمپنی نے گوگل نیٹو کیمرہ ایپ گوگل کیمرہ نامی ایک ایسی ایپلی کیشن متعارف کرادی، جو بہترین سیلفی لینے میں مدد فراہم کرتی ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق اس طرح کی کئی اور سیلفی ایپلی کیشنز پہلے سے ہی کام کر رہی ہیں، تاہم گوگل کے مطابق گوگل کیمرہ ایپ کو خصوصی طور پر بہترین سیلفی کے لیے تیار کیا گیا، جو دیگر ایپس کے مقابلے اچھے رزلٹ کی تصویر اور ویڈیوز بنانے میں مدد فراہم کرتی ہے۔گوگل کیمرہ ایپلی کیشن کو فوری طور پر اینڈرائڈ موبائل کے لیے متعارف کرایا گیا ہے، جب کہ فی الحال یہ ایپ کچھ ممالک میں دستیاب نہیں، لیکن جلد ہی یہ ایپ تمام ممالک میں دستیاب ہوگی۔کمپنی نے یہ وضاحت نہیں کی کہ گوگل کیمرہ کن کن ممالک میں فوری طور پر دستیاب نہیں، تاہم کمپنی کے مطابق اسے پلے اسٹور سے مفت ڈائون لوڈ کیا جاسکتا ہے۔گوگل کیمرہ ایپ نہ صرف سیلفی بلکہ سیلفی ویڈیو بنانے میں بھی مدد فراہم کرتی ہے خیال رہے کہ فوری طور پر یہ ایپ پاکستانی صارفین کے لیے بھی گوگل ایپ پر دستیاب نہیں تھی، تاہم اسے پاکستان سمیت دیگر ممالک میں متعارف کرائے جانے کا کام جاری ہے۔
image

 نوجوانوں کے لئے ایک نئے مطالعاتی جائزے میں بتایا گیا ہے کہ نوجوانوں کی دماغی صحت کے لیے سوشل میڈیا کا پلیٹ فارم انسٹاگرام سب سے نقصان دہ اور یوٹیوب سب سے فائدہ مند ہے۔ میڈیارپورٹس کے مطابق یہ تازہ ترین درجہ بندی صحت عامہ سے متعلق برٹش رائل سوسائٹی کی ایک حالیہ رپورٹ میں کی گئی ہے۔سوسائٹی کی چیف ایگزیکٹو شرلی کرامر کا کہنا تھا کہ سوشل میڈیا کا شمار سگریٹ اور الکحل سے زیادہ نشہ آور چیز کے طور پر کیا جاتا ہے اور یہ لت نوجوانوں کی زندگیوں میں کچھ اس انداز سے سرایت کر چکی ہے کہ جب ان کی دماغی صحت کے مسائل پر بات کی جاتی ہے تو اسے نظرانداز کرنا ممکن نہیں ہوتا۔ان کا کہنا تھا کہ انسٹاگرام اور سنیپ چیٹ کو دماغی صحت لیے سب سے زیادہ نقصان دہ اس لیے سمجھا جاتا ہے کیونکہ سوشل میڈیا کے یہ دونوں پلیٹ فارم تصویروں پر بہت زیادہ مرکوز ہوتے ہیں اور وہ نوجوانوں میں اپنے اندر کسی کمی کا ?حساس اور فکر مندی کے جذبات پیدا کرتے ہیں۔ اس مطالعاتی جائزے کے لیے ریسرچرز نے برطانیہ کے تقریباً 15 سو نوجوانوں سے انٹرویوز کیے جن کی عمریں 14 سے 24 سال کے درمیان تھیں۔سوال نامے میں یہ کہا گیا تھا کہ وہ سوشل میڈیا کی مختلف سائیٹس کے صحت اور جذبات پر اثرات کے حوالے سے درجہ بندی کریں۔سوشل میڈیا کے اثرات میں پریشانی پیدا ہونا، مایوسی میں مبتلا ہونا، نیند کا اڑ جانا اور حقیقی زندگی میں خود کو تنہا محسوس کرنا شامل تھا۔برٹس رائل سوسائٹی کے مطابق سب سے مثبت رائے یوٹیوب کے بارے میں تھی جب کہ اس کے بعد ٹوئٹر، فیس بک، سنیپ شیٹ اور انسٹاگرام کا نمبر تھا۔  نو جوانوں کیلیئے  انسٹا  نقصان دہ   ایک جائزے میں ظاہر گیا ہے کہ دماغی صحت کے لیے انسٹا گرام سب سے نقصان دہ ہے  اور  یو ٹیوب سب سے ذیادہ فائدہ مند ہے۔ آن لائن ما نیٹرنگ   لا ہور   رپورٹس کے مطابق صحت عامہ سے متعلق برٹش رائل سوسائٹی کی ایک حالیہ رپورٹ میں بتا یا گیا  ہے کہ      سوسائٹی  سوشل میڈیا کا شمار سگریٹ اور الکحل سے زیادہ نشہ آور چیز کے طور پر کیا جاتا ہے اور یہ لت نوجوانوں کی زندگیوں میں کچھ اس انداز سے سرایت کر چکی ہے کہ جب ان کی دماغی صحت کے مسائل پر بات کی جاتی ہے تو اسے نظرانداز کرنا ممکن نہیں ہوتا۔ ان کا کہنا تھا کہ  انسٹا گرام اور سنیپ  چیٹ کو دماغی صحت لیے سب سے زیادہ نقصان دہ اس لیے سمجھا جاتا ہے کیونکہ سوشل میڈیا کے یہ دونوں پلیٹ فارم تصویروں پر بہت زیادہ مرکوز ہوتے ہیں اور وہ نوجوانوں میں اپنے اندر کسی کمی کا ?حساس اور فکر مندی کے جذبات پیدا کرتے ہیں۔ اس  مطالعاتی  جائزے کے لیے  ریسرچرز  نے برطانیہ کے تقریباً 15 سو نوجوانوں سے  انٹرویوز  کیے جن کی  عمریں 14 سے 24 سال کے درمیان تھیں ۔سوا ل نامے میں یہ کہا گیا تھا کہ وہ سوشل میڈیا کی مختلف سائیٹس کے صحت اور جذبات پر اثرات کے حوالے سے درجہ بندی کریں۔ سوشل میڈیا کے اثرات میں پریشانی پیدا ہونا، مایوسی میں مبتلا ہونا، نیند کا اڑ جانا اور حقیقی زندگی میں خود کو تنہا محسوس کرنا شامل تھا۔برٹس رائل سوسائٹی کے مطابق سب سے مثبت رائے یوٹیوب کے بارے میں تھی جب کہ اس کے بعد ٹوئٹر ،  فیس بک،  سنیپ شیٹ اور انسٹاگرام کا نمبر تھا۔ ماہرین نے اپنی رپورٹ میں یہ سفارش کی ہے کہ سوشل میڈیا کے منفی اثرات کے مقابلے لیے ضروری ہے کہ ان سائٹس پر ایسے انتباہی نوٹ دکھائے جائیں جن میں لوگوں کو سوشل میڈیا کے بہت زیادہ استعمال کے خطرات سے آگاہ کیا جائے۔ سروے میں شامل 71 فی صد افراد نے اس تجویز کی حمایت کی۔ ایک اور تجویز میں کہا گیا ہے کہ سوشل میڈیا کی کمپنیاں ایک صارف کی پوسٹ سے یہ کہہ سکتی ہیں کہ وہ پریشانی میں ہیں اور مدد کے حوالے سے مناسب طور پر ان کی راہنمائی کر سکتی ہیں۔
image

 امریکی سائنسدانوں نے وائی فائی سے سو گنا تیز الٹرا فاسٹ وائی فائی  متعارف کرایا ہے۔امریکا کی براون یونیورسٹی کے اسکول آف انجینئرنگ کے سائنسدان اس ٹیکنالوجی کی تیاری پر کام کررہے ہیں ۔ان کا کہنا تھا کہ ہم نے علیحدہ علیحدہ ڈیٹا اسٹریم ٹرانسمیشن کیلئے ٹیرا ہرٹز ویوز کو استعمال کیا جو کہ بہت تیز رفتار ہے جبکہ اس میں خامیوں کی شرح نہ ہونے کے برابر ہے۔انہوں نے روایتی مائیکرو ویوز کی بجائے ٹیرا ہرٹز ویوز کو استعمال کرکے 50 گیگا بائٹ فی سیکنڈ کی رفتار سے ڈیٹا کو ٹرانسفر کیا۔بیشتر وائرلیس نیٹ ورکس میں زیادہ سے زیادہ رفتار 500 میگا بائٹس فی سیکنڈ ہوتی ہے۔رپورٹ کے مطابق یہ پہلی بار ہے کہ اس طرح کی ویوز کو حقیقی ڈیٹا کی ٹرانسمیشن کے لیے استعمال کیا گیا اور ہمارے نتائج ثابت کرتے ہیں کہ مستقبل میں ٹیرا ہرٹز وائرلیس نیٹ ورکس کام کررہے ہوں گے۔موجودہ وائس اور ڈیٹا نیٹ ورکس میں مائیکرو ویوز کو استعمال کیا جاتا ہے جو سگنلز کو وائرلیس طریقے سے منتقل کرتے ہیں ان تجربات کے نتائج کو جریدے نیچر کمیونیکشن میں شائع کیا گیا۔
image