دلچسپ وعجیب
طبی جریدے  دی لینسنٹ کی ایک رپورٹ کے مطابق 2015 میں دنیا میں 90 لاکھ افراد کی ہلاکت کی وجہ آلودگی تھی،رپورٹ کے یہ نتائج دو سالہ منصوبے سے اخذ کیے گئے ہیں جبکہ ہلاکتیں زیادہ تر کم متوسط اور کم آمدن والے مالک میں ہوئیں،یہ وہ ممالک ہیں جہاں ایک چوتھائی اموات کی وجہ آلودگی ہی ہوتی ہے، بنگلہ دیش اور صومالیہ ان ممالک میں شامل ہے جو سب سے زیادہ متاثرہ ممالک میں شامل ہیں، برونائی اور سویڈین وہ ممالک ہیں جہاں آلودگی سے متاثر ہو کر ہلاک ہونے والوں کی تعداد سب سے کم ہے،بی بی سی کے مطابق آلودگی سے زیادہ تر اموات غیر متعدی امراض کی وجہ سے ہوئیں جن میں ہارٹ اٹیک، سٹروک اور پھیپھڑوں کا سرطان شامل ہیں،نیویارک میں مانٹ سینائی میں واقع ایکن سکول آف میڈیسن سے وابستہ پروفیسر فلپ لینڈریگن کا کہنا ہے کہ آلودگی ماحولیاتی چیلینج سے بہت بڑا مسئلہ ہے،یہ ایک بڑا اور عالمی مسئلہ ہے جو انسانی صحت اور بہبود کے بہت سے پہلو ئوں پر اثر انداز ہوتا ہے،آلودگی سے سب سے بڑا خطرہ ساڑھے چھ لاکھ قبل از وقت ہلاکتوں کی صورت میں سامنے آیا، آلودگی کی اس قسم میں گیسز بھی ہیں جن میں گھروں میں لکڑی کا جلنا اور کوئلے کا جلانا شامل ہے۔دوسرا بڑا خطرہ پانی کی آلودگی ہے جس کی وجہ سے 18 لاکھ اموات ہوئیں جبکہ کام کی جگہ آلودگی کے باعث آٹھ لاکھ اموات ہوئیں،رپورٹ کے مطابق کل 92 فیصد اموات غریب ممالک میں ہوئیں جو کہ معاشی ترقی کے تیز عمل سے گزر رہے ہیں جیسے کے بھارت جو کہ آلودگی سے متاثرہ ممالک کی فہرست میں پہلے نمبر پر ہے اور چین جس کا نمبر 16واں ہے،اندازے کے مطابق برطانیہ میں آلودگی کے باعث 50 ہزار اموات ہوئیں جو کہ کل اموات کا آٹھ فیصد ہیں،188 ممالک کی فہرست میں برطانیہ کا نمبر 55واں ہے، تاہم امریکہ، جرمنی، فرانس، سپین، اٹلی اور ڈنمارک سمیت بہت سے یورپی ممالک اس انڈیکس میں برطانیہ سے اوپر ہیں،برٹش لنگز فائونڈیشن سے وابستہ ڈاکٹر پینے وڈم کا کہنا ہے کہ دنیا بھر میں فضائی آلودگی خطرناک حد پر پہنچ چکی ہے ،ان کا کہنا ہے کہ اس صورتحال کی ایک وجہ ڈیزل سے چلنے والی گایوں پر انحصار ہے جو کہ زہریلے مادے اور گیسں فضا میں چھوڑتے ہیں،محققین کا کہنا ہے کہ فضائی آلودگی غریب ممالک کے علاوہ امیر ممالک میں موجود غریبوں کو بھی متاثر کر رہی ہے،ایک نجی ادارے پیور ارتھ سے وابستہ کارتی سنڈیلا کا کہنا ہے کہ آلودگی، غربت، خراب صحت اور معاشی انصاف کا باہمی طور پر گہرا تعلق ہوتا ہے،آلودگی سے بنیادی انسانی حقوق مثلا ًجینے کے حق، صحت، محفوظ کام اس کے علاوہ بچوں اور کمزوروں کی حفاظت کو خطرہ لاحق ہوتا ہے۔

 دور کے ڈھول سہانے ہونے کا محاورہ اکثر لوگوں نے سنا ہوگا مگر اس بار ایک تحقیقی مقالے میں بھی ایسی ہی کچھ باتیں کی گئی ہیں۔ جن میں کہا گیا ہے کہ دنیا کے مجموعی وزن سے کہیں زیادہ سونا خلا میں بہت فاصلے پر موجود ہے۔ تفصیلات کے مطابق زمین اور مدار پر نصب انتہائی حساس اور طاقتور قسم کے آلات اور دوربینوں کی مدد سے یہ پتہ چلا ہے کہ 2ستاروں کے تصادم کے نتیجہ میں سونا اس بڑی مقدار میں ظاہر ہوگیا ہے۔ جو زمین کے مجموعی وزن سے بھی زیادہ ہے مگر افسوس کا مقام یہ ہے کہ یہ سونا کرہ ارض سے 13کروڑ نوری سال کے فاصلے پر موجود ہے۔ واضح ہو کہ سائنسدانوں نے کرہ ارض پر تابکاری لہروں کا ٹھوس سراغ پانچویں بار لگایا ہے اور یہ پتہ چلا ہے کہ سٹیلر آتشیں گولے سے ہی یہ لہریں زمین تک پہنچتی ہیں اور انکے تانے بانے مشہور زمانہ بلیک ہولز تک جاتے ہیں۔ تازہ ترین تحقیق سے یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ نیوٹرون کے حامل ستاروںکی ٹکر سے گیما شعاعوں کا فشاربھی ہوا ہے لیکن یہ محدود رہا ہے۔سائنسدانوں کا یقین سے کہنا ہے کہ کرہ ارض یا ہماری کائنات سے بہت دور ہی سہی لیکن سونے کا یہ حیرت انگیز بڑا ذخیرہ ایک حقیقت ہے۔ واضح ہو کہ دونوں ستاروں کا تصادم ہائیڈرا کانسٹالیشن کی حدود میں 13کروڑ سال قبل پیش آیا تھا اور اتنے طویل فاصلے کی وجہ سے اس تصادم کے نتیجہ میں پیدا ہونے والی روشنی اور شعاعیں اب جاکر زمین تک پہنچی ہیں۔ تحقیق کے مطابق سونے کے اتنے بڑے ذخیرے کے ساتھ اس تصادم کے نتیجہ میں پلاٹینیم ، یورینیئم اور دیگر بڑی دھاتو ںکی بڑی مقدار بھی وجود میں آئی۔ مگر ابھی زمین تک انکی پہنچ نہیں ہوسکی ہے۔
image

سعودی شہر مکہ کے  نائب گورنر  شہزادہ عبداللہ بن بندر نے حکم جاری کیا ہے کہ مکہ مکرمہ میں ٹیکسی صرف سعودی شہری ہی چلا سکیں گے،سعودی اخبار کے مطابق انہوں نے جدہ گورنر ہائوس میں نائب وزیر محنت کی موجودگی میں ملازمتوں کی سعودائزیشن کے پروگرام کا افتتاح کیا،شہزادہ عبداللہ بن بندر نے اس امر پر زوردیا کہ مکہ  میں ٹیکسی  چلانے کی اجازت صرف سعودی شہریوں کو ہو گی،انہوں نے کہا کہ خاص طور پر حج و عمرہ کے موسم میں سعودیوں کے سوا اس کی اجازت کسی کو حاصل نہیں ہو گی۔  
image

 برازیلیا میں مقیم ڈی سلوا خاندان کے ہر فرد کے ہاتھ میں 5 انگلیاں اور ایک انگوٹھا ہے جبکہ ہاتھوں اور پیروں کی کل انگلیوں کی تعداد 24 ہے۔اپنے شہر میں دی فیملی آف سکس کےنام سے شہرت رکھنے والی ڈی سلوا فیملی نے اضافی انگلیوں کو چھپانے کے بجائے فخر سے دکھانے کو ترجیح دی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ہمیں دیگرانسانوں سے مختلف بنایا گیا ہے اس پر ہمیں فخر کرناچاہئے نہ کہ افسردہ ہونا چاہئے۔عام طورپردیکھنے میں آیا ہے کہ جن افرد کی اضافی انگلیاں ہوتی ہیں وہ انہیں استعمال کرنے کے قابل نہیں ہوتے لیکن یہ برازیلین فیملی اپنی اضافی انگلیوں سے پیانو بھی بجا سکتی ہے جبکہ دوسری انگلیوں کی طرح دیگر کاموں میں بھی استعمال کرنے کے قابل ہے۔
image

دنیا میں آئے روز نئی سے نئی خبریں سننے کو ملتی ہیں جن کو سن کر یا دیکھ کر اپنے کانوں اور آنکھوں پر بھی یقین نہیں آتا۔ ویسے تو  دنیا کے ممالک اپنی آبادی ، معیشت ، جنگی ساز وسامان اور داخلی و خارجی امور کی بنا پر اہمیت حاصل کرتے ہیں ۔  لیکن اب ایک ایسے ملک کا بھی انکشاف ہوا ہے جس کی آبادی صرف 33نفوس پر مشتمل ہے۔ اس ملک کا نام مولوسیا ہے ۔جو امریکی ریاست نیواڈا میں 6.3ایکڑ پر مشتمل ہے۔ اس ملک کو اقوام متحدہ یا دوسرے ملکوں کے نزدیک کسی الگ یا خود مختار ریاست کی حیثیت حاصل نہیں ۔ لیکن پھر بھی یہاں آنے والوں کو اپنے پاسپورٹ پر مہر لگوانی پڑتی ہے اور اس ملک کا اپنا قانون ، ثقافت اور کرنسی ہے۔1977میں کیون بوگلے نامی شخص اور اس کے دوستوں کو الگ ملک بنانے کا خیال آیا ۔ اب بوگلے اس ملک کے سربراہ اور ان کی اہلیہ خاتون اول بنی بیٹھی ہیں۔ اس خود ساختہ حکمران جوڑ ی کے دو بچے ہیں۔
image

دنیا بھر میں لوگوں کی مصروفیات میں اضافہ ہوتا جارہاہے ۔ جس کی وجہ سے وہ اپنوں سے دور ہوتے جارہے ہیں ۔ اکثر ہم اپنے انتہائی قریبی رشتہ داروں دوستوں کو اس لیے ناراض کر دیتے ہیں کہ ہمارے پاس ان کے لیے تھوڑا سا وقت بھی نہیں ہوتا۔ کبھی کبھار دی گئی دعوت کو آپ ایک لمحے میں مسترد کر دیتے ہیں ۔ محققین کا کہنا ہے کہ آپ کا کوئی ساتھی آپ کو ظہرانے کی دعوت دے یا پھر جمعہ کی شب ڈنر پر بلائے تو آپ اس سے آئی ایم سوری  کہہ کر جان بچا لیتے ہیں تو وہ منہ بنا لیتا ہے لیکن اب جو جائزہ رپورٹ تیار کی گئی ہے اس میں کہا گیا ہے کہ یہ معذرت دوسرے شخص کیلئے انتہائی منفی ثابت ہوتی ہے۔ اگرچہ آپ خود کو اچھا سمجھنے لگتے ہیں کہ آپ نے بروقت اس سے معذرت کرلی۔ محققین نے بتایا کہ آپ جس سے سوری کر رہے ہوتے ہیں وہ شخص خود کو مسترد کردہ شخص تصور کررہا ہوتا ہے اور وہ خود بھی سمجھتا ہے کہ وہ بھی اس قسم کی معذرت کرے تاہم اس کے آئی ایم سوری کہنے اور آپ کے معذرت کرنے میں کافی فرق پایا جاتا ہے۔ یہ بھی خوب اچھی طرح سمجھنا چاہئے کہ متاثرہ شخص اسی طرح آپ سے انتقام لے سکتا ہے۔ اس جائزہ رپورٹ کی تیاری کے دوران ایک ہزار شرکا سے گفتگو کی گئی اور یہ دیکھا گیا کہ آئی ایم سوری کہنے پر دوسرے شخص کا تاثر کیا بنتا ہے۔ ان شرکا میں 480نفسیات کے طالب علم تھے۔ انہیں مختلف مواقع بتائے گئے جس میں ایک یہ بھی تھا کہ آپ کے کمرے میں رہنے والا ساتھی جو مزید آپ کے ساتھ رہنا چاہتا ہے لیکن آپ اسے نکال باہر کرنا چاہتے ہیں۔ ایسے شخص سے جب آپ سوری کہتے ہیں تو ظاہر ہے کہ اس کے احساسات اور جذبات کو ٹھیس پہنچ رہی ہوتی ہے۔
image

 ماہرین آثار قدیمہ نے سعودی عرب کے دور دراز صحرامیں عجیب و غریب آثار دریافت کئے ہیں۔ انہیں البوابات دروازوں کا نام دیا گیا ہے۔ یہ بالائی حصے سے دروازوں کی شکل کے ہیں۔ سائنسدانوں کا کہناہے کہ چھوٹا دروازہ 13میٹر لمبا ہے جبکہ بڑے دروازے کی لمبائی 518میٹر پائی گئی ہے۔ گوگل ارتھ کے ذریعے لی گئی تصاویرسے ظاہر ہورہا ہے کہ دور دراز صحرامیں دیو ہیکل گنبد کھڑے ہوئے ہیں۔ انکا حجم فٹبال اسٹیڈیم سے 4گنا زیادہ ہے۔  بعض لوگوں کا خیال ہے کہ ممکن ہے کہ یہ دروازے علاقے میں آتش فشانوں کی باقیات ہوں۔ کینیڈا کے اسکالر ڈیوڈ کا کہناہے کہ ایسا لگتا ہے کہ مذکورہ خطے میں انسان کی سب سے پرانی تخلیق یہی آثار قدیمہ ہوں۔
image

برطانیہ میں ایک خاتون شہری نے دارالحکومت کے وسط میں واقع اپنا مکان 2 پائونڈ کے عوض فروخت کیلئے پیش کر دیا ۔ خاتون کی جانب سے یہ پیشکش مکان کو اس کی مارکیٹ ویلیو میں فروخت میں ناکام ہو جانے کے بعد سامنے آئی ہے ، یہ مالیت 2.85 لاکھ پائونڈ سے زیادہ ہے۔برطانوی اخبارکے مطابق دو بیڈ روم اور ایک لائونج پر مشتمل یہ مکان لندن کے جنوب مشرق میں دریائے ٹیمز سے دو منٹ کی مسافت پر واقع ہے اور اس کی مارکیٹ ویلیو 2.85 لاکھ پائونڈ سے کم نہیں ہے۔برطانوی خاتون شہر میں پراپرٹی بروکر کمپنیوں کے ذریعے مناسب خریدار پانے میں ناکام ہو گئی۔ اس کے بعد خاتون نے اپنا مکان فروخت کرنے کیلئے ایک منفرد طریقہ اختیار کیا ہے۔ مکان کی فروخت کیلئے ایک خصوصی ویب سائٹ بنائی گئی ہے جس پر مکان کی قیمت کے طور پر 2 پاونڈ کا ٹکٹ فروخت کیا جا رہا ہے۔ مطلوبہ رقم کے حصول کے بعد ٹکٹ خریدنے والے تمام شرکا کے درمیان قرعہ اندازی کی جائیگی اور خوش قسمت انسان کو مکان حوالے کر دیا جائیگا اس طرح خاتون کو پوری قیمت وصول ہو جائیگی جبکہ خریدار صرف 2 پائونڈ یعنی قرعہ اندازی میں شرکت کے ٹکٹ کے عوض گھر حاصل کرلے گا۔
image

کواکیوریلی سائمنڈز نے ایشیا کی 400 بہترین یونیورسٹیوں کی رینکنگ جاری کردی جس میں پاکستان کی 9 یونیورسٹیز بھی شامل ہیں۔پاکستانی یونیورسٹیز کے درجات میں گزشتہ برس کی نسبت اس سال نمایاں بہتری آئی ہے۔کیو ایس کی ایشیائی انٹرنیشنل یونیورسٹی رینکنگ کی فہرست میں نَسٹ یونیورسٹی91 نمبر پر رہی۔لَمز یونیورسٹی آٹھ درجے ترقی کےساتھ 103، قائد اعظم یونیورسٹی 133، کومسیٹ 190 جبکہ کراچی یونیورسٹی 193 نمبر پر موجود ہے۔پاکستان انسٹیٹیوٹ آف انجینئرنگ اینڈ اپلائیڈ سائنسز اکیس درجے ترقی کےساتھ 128ویں، یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی  پچاس درجے ترقی کے ساتھ 200ویں، پنجاب یونیورسٹی 232ویں جبکہ آغا خان یونیورسٹی  نمایاں بہتری کے ساتھ 234ویں نمبر پر رہی۔لمز یونیورسٹی کے وائس چانسلر ڈاکٹر سہیل نقوی کا رینکنگ کے حوالے سے کہنا تھا کہ ڈاکٹریٹ اساتذہ کی وجہ سے پاکستان کا معیار تعلیم بہتر ہو رہا ہے۔کیو ایس کی رینکنگ میں سنگاپور کی نَنیانگ ٹیکنالوجیکل یونیورسٹی ایشیا کی سب سے بہترین یونیورسٹی قرار دیا گیا ہے۔نیشنل یونیورسٹی آف سنگاپور رینکنگ میں دوسری، ہانگ کونگ یونیورسٹی میں آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی تیسری، کوریا ایڈوانسڈ انسٹیٹیوٹ آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی چوتھی جبکہ یونیورسٹی آف ہانگ کونگ کا پانچواں نمبر ہے۔
image

سعودی عرب میں ڈرائیونگ کی اجازت ملنے کے بعد خواتین جلد مسافر طیارے بھی اڑائیں گی۔ سعودی اخبار کے مطابق سعودی عریبین ایئرلائنز کے ڈائریکٹر جنرل صالح الجاسر نے کہا ہے کہ  سعودی عرب میں خواتین کو ڈرائیونگ کی اجازت ملنے کے بعد اب جلد ہی خواتین مسافر طیارے بھی اڑائیں گی۔ انھوں نے کہا کہ سعودی عرب سے عراق کے متعدد شہروں کے لئے سعودی عریبین ایئرلائنز کی پروازیں شروع کی جائیں گی۔ ڈائریکٹر جنرل  نے کہا کہ آئندہ بغداد اور جدہ کے درمیان روزانہ 2 پروازیں چلائی جائیں گی اور جلد ہی عراق کے دیگر شہروں کےلئے پروازوں کا سلسلہ شروع کردیا جائیگا۔     
image

 سوئٹزر لینڈ  کے محکمہ سیوریج کے ذرائع کا کہنا ہے کہ یہاں کے لوگ ہر سال کروڑوں فرانک مالیت کے چاندی اور سونے کے زیورات وغیرہ فلش میں بہا دیتے ہیں۔  سروے سے پتہ چلا  ہےکہ شہر کے ویسٹ واٹر ٹریٹمنٹ پلانٹس پر 43 کلوگرام سونا اور 3 ٹن چاندی برآمد ہوئی جو مختلف شکل میں تھی۔ مقامی حکام کا خیال ہے کہ تمام چیزیں زیادہ تر نت نئی گھڑیاں استعمال کرنے والے صارفین ، انہیں تیار کرنے والے کارخانوں اور دوا ساز کمپنیوں کی ہیں جو خود بھی اپنی ادویات میں سونے چاندی کے اوراق اور ذرات کا استعمال کرتی ہیں۔ باخبر ذرائع کے مطابق اکثر سنا جاتا ہے کہ بعض عورتیں غصے میں آکر اپنی قیمتی انگوٹھیاں اور دوسرے زیورات فلش میں پھینک دیتی ہیں مگر اطلاعات کے مطابق اب تک اس سامان میں کوئی انگوٹھی نہیں ملی ۔
image

برطانوی شہزادی کیٹ مڈلٹن پہلی بار رقص کرتی نظر آئیں تو شہزادہ ولیم بھی ٹکٹکی باندھ کر دیکھتے رہے۔کیٹ مڈلٹن اپنے شوہر ولیم اور دیور ہیری کے ساتھ ایک چیرٹی ایونٹ میں شرکت کے لیے پیڈنگٹن اسٹیشن پہنچیں ، جہاں فلم کے کردار پیڈنگٹن بیئر نے شہزادی کا ہاتھ تھاما اور انہیں ساتھ رقص کی دعوت دی۔شہزادی اور شہزادوں نے اس موقع پر شاہی خاندان کے تعاون سے چلنے والے خیراتی اداروں کے بچوں سے بھی بات چیت کی۔
image

 گذشتہ رات دبئی کی عوام نے آسمان کی تاریکیوں میں ایک میزائل نما چیز دیکھی جس کے پیچھے سے آگ نکل رہی تھی،جسے دیکھ کر عوام میں بے چینی پھیل گئی آخر کیا ہے۔ یہ شہاب ثاقب تھا ایک جلتا ہوا پتھر جو زمین کے مدار میں داخل ہو کر تیزی سے نیچے کی جانب گرنے لگا، ہوا کی تیز ترین رگڑ سے یہ پتھر جلنے لگتا ہے۔ عوام نے جلدی سے سوشل میڈیا پر اس جلتی ہوئی چیز کی تصویریں پوسٹ کرنا شروع کر دیں،دبئی کے پرنس شیخ راشد المختوم نے بھی اپنی پوسٹ میں ایک ویڈیو لگائی جس میں اس شہاب ثاقب ہی بتایا گیا۔ 
image

  بھارت میں پہلی بار ایک خواجہ سرا جوتیا  جندال کو سول کورٹ کا جج تعینات کر دیا گیا ، خواجہ سر ا جج کی عمر 29سال ہے جبکہ انہوں نے2010میں قانون کی تعلیم حاصل کی۔ اس طرح جوتیا اپنے ملک کی پہلی باقاعدہ خواجہ سرا جج ہونے کا اعزاز حاصل کرنے میں کامیاب ہو گئی۔ جوتیا جندال مغربی بنگال میں ایک متعصب ہندو گھرانے میں پیدا ہوئی، گھر والوں نے اس کے ساتھ ناروا رویہ رکھا جس کے باعث اس نے اپنے گھر بار کو چھوڑ دیا اور اترپردپش کے علاقے اسلام پور کو اپنا ٹھکانہ بنا لیا، وہ یہاں پر دن کو کالج میں جاتی جبکہ راتوں کو مختلف تقاریب میں ڈانس کرکے اپنی گزر بسر کرتیں، اس دوران وہ اپنی نیند پوری کرنے کے لئے شہر کے مرکزی بس سٹینڈ پر آرام کرتی۔ جوتیا جندال نے اپنی زندگی میں خواجہ سرائوں کے حقوق کے لئے جدوجہد کرنا شروع کی جس میں انہیں سرکاری نوکریاں اور تعلیم کی سہولیات شامل تھیں، وہ اپنے علاقے کی پہلی خواجہ سرا تھی جسے پہلی بار ووٹر قومی شناختی کارڈ دیا گیا۔ اپنے گھر سے نکلنے کے 10سال کے بعد جوتیا سول عدالت کی جج مقرر ہوگئی اور جس عدالت میں اسے جج مقرر کیا وہ وہاں سے محض چند قدم کے فاصلے پر ہے جہاں بس سٹاپ پر وہ راتوں کو سوتی تھی۔
image

 سعودی عرب میں شاہی فرمان کے جاری ہونے کے بعد سے خواتین بھی ڈرائیونگ کرنے کی اجازت رکھتی ہیں ۔ لیکن اس فرمان کا نفاذ اگلے سال جون 2018 میں ہو گا تب سعودی خواتین قانونی طور پر گاڑی چلا سکیں گیں۔ لیکن پھر بھی ریاست میں جگہ جگہ خواتین کو گاڑی چلانا سکھا نے کی تشہیر کی جا رہی ہے ۔ اور انہیں ڈرائیونگ سکھانے والوں میں سے ایک نے مقامی میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ خواتین کو ڈرائیونگ 40 سعودی ریال فی گھنٹہ کے عوض سکھائے گا۔ اس کا کہنا ہے کہ ریاست میں پہلے ہے دو حادثے پیش آ چکے ہیں اس لیے وہ خواتین کو گاڑی چلانی سکھانے سے پہلے انکا ایک ٹیسٹ لے گا کہ آیا ان کو ڈرائیونگ سے متعلق کوئی معلومات ہیں بھی یا نہیں ۔ اسی لیے وہ اتنی زیادہ فیس بھی لے رہا ہے۔
image

 بینائی سے محروم شہری سفید چھڑی کے سہارے راستہ ٹٹول ٹٹول کر چلتے ہیں لیکن ایک نوجوان ایسا بھی ہے جس نے نابینا ہونے کے باوجود سب کو حیران کردیا۔  وہ خطرناک ترین ایڈونچر کرتا ہے تو دیکھنے والوں کے دل دہل جاتے ہیں۔ حیدر علی نامی یہ نوجوان گہری کھائیاں، نیچے بہتا پانی اور رسیوں پر جھولتا خطروں کا کھلاڑی ہے۔
image

 برطانیہ میں دکاندار کے اکائونٹ میں غلطی سے 7 لاکھ پائونڈ منتقل ہوگئے جس میں سے اس نے دو لاکھ پائونڈ خرچ کر ڈالے تاہم اسے گرفتار کرلیا گیا۔ برطانیہ کے شہر لیسیسٹر سے تعلق رکھنے والے ایک دکاندار کے اکائونٹ میں غلطی سے 7 لاکھ برطانوی پائونڈ منتقل ہوگئے، یہ رقم اکتوبر  2014 سے اکتوبر 2016 کے درمیان منتقل ہوئی جو اے ٹی ایم کمپنی ڈی سی پے منٹس کی جانب سے ایک وولورہیمپٹن کے ایک جواخانہ کیسینو کے اکا ئونٹ میں منتقل ہونا تھی۔ کمپنی کی جانب سے ایک معمولی سی غلطی کی وجہ سے یہ تمام رقم 2 سال تک سندیپ سنگھ کے اکائونٹ میں منتقل ہوتی رہی اور اس نے واقعے کی کوئی رپورٹ درج نہ کی بلکہ وہ خاموشی سے یہ رقم خرچ کرتا رہا۔ سندیپ سنگھ نے اس رقم سے ایک گھر خریدا اور 80 ہزار پائونڈ رقم اپنے آبائی ملک بھارت بھی بھیجی تاہم رقم بھیجنے والے کو جب اپنی غلطی کا احساس ہوا تو اس نے واقعے کی رپورٹ پولیس میں درج کی جس کے بعد سندیپ سنگھ  کو   گرفتار  کر لیا   گیا۔ پولیس نے ملزم کو حراست میں لینے کے بعد اس کا بینک اکائونٹ بھی منجمد کر دیا جس میں اس وقت 5 لاکھ پاونڈ کی رقم موجود تھی۔ بعد ازاں ملزم کو عدالت میں پیش کیا گیا جہاں جج نے سندیپ سنگھ کو جرم کی پاداش میں ایک سال قید  کی سزا سناتے ہوئے کہا  کہ واضح طور پر یہ رقم آپ کی نہیں تھی اس لیے آپ کو فوری طور پر بینک کو بتانا چاہیے تھا۔
image

 یوکرائن میں جانوروں کے حقوق کے تحفظ کیلئے سرگرم تنظیم کے کارکنان کی بڑی تعداد  نےچہروں پر جنگلی جانوروں کی شکل کے پینٹ کروا کر احتجاج  کیا ہے۔ فرانسی خبر رساں ادارے کے مطابق احتجاج میں شامل خواتین کی اکثریت نے ٹائیگرز کی مشابہت والی پیٹنگز کرا رکھی تھیں۔ مظاہرین کو دیکھ کر شہری محظوظ ہوتے رہے۔
image

سعودی عرب میں بیوی نے شوہر پر کھولتا تیل پھینک کر اسے بری طرح جلا  دیا،عرب ٹی وی کے مطابق یہ واقعہ سعودی عرب کے شہر عسیر کی تثلیث گورنری میں پیش آیا جہاں بیوی نے شوہر پر کھولتا تیل پھینک کر اسے بری طرح جلا دیا،کھولتے تیل سے جھلسے شخص کو عسیرکے ایک مقامی ہسپتال منتقل کیا گیا ہے جہاں اس کا علاج جاری ہے، دوسری جانب اس وحشیانہ اقدام کی مرتکب خاتون کے خلاف سخت ترین قانونی کارروائی کا مطالبہ کیا جا رہا ہے، عسیر میں محکمہ صحت کے ترجمان عبداللہ سعید الغامدی نے بتایا کہ مریض کو تثلیث کے جنرل ہسپتال داخل کیا گیا ہے جہاں اسے انتہائی نگہداشت وارڈ میں رکھا گیا ہے، اس کا جسم شدید گرم تیل کے نتیجے میں بری طرح جھلس چکا ہے جس کے نتیجہ میں اس کی حالت تشویشناک ہے، ترجمان کا کہنا تھاکہ یہ واقعہ گھریلو ناچاقی کے باعث پیش آیا،پولیس نے واقعہ کی انکوائری کیلیے معاملہ پراسیکیوٹر جنرل کے سامنے پیش کردیا ہے۔
image

 فیصل آباد کے نجی ہسپتال میں مسیحا ئوں کا  کار نا مہ  سامنے آ گیا،آپریش کے دوران اسفنج مریضہ کے پیٹ میں بھول گئے، حا لت خراب ہونے پر دوبارہ آپریشن کر کے نکالا گیا ،لواحقین نے نجی ہسپتال کے با ہر احتجاج  کیا،پولیس نے محکمہ صحت کی مدد سے ہسپتال سیل کر کے میاں بیوی ڈا کٹرز کو مقدمہ درج کر کے گرفتار کر لیا، تفصیلات کے مطا بق چند  دن پہلے مراد آباد کی رہا ئشی مرینا ڈلیوری کے لیے غلام محمد آباد کے نجی ہسپتال آئے یہاں ڈاکٹر اشفاق اور اسکی بیوی رقیہ اشفاق نے مریضہ کا آپریشن کیا  اوردوران آپریشن ڈا کٹر بلڈ صاف کر نے والا اسفنج مریضہ کے پیٹ میں ہی بھول گئے ،مریضہ کی حا لت خراب ہونے پر اس کا دوبارہ چیک اپ کروایا گیا  اوردوبارہ آپریشن کرکے مریضہ کے پیٹ سے اسفنج نکالا گیا ،صورتحال واضع ہو نے پر لواحقین اور اہل علاقہ نے نجی ہسپتال کے سا منے احتجاج  کرتے ہوئے ڈاکٹر کی گرفتاری کا مطالبہ کیا، سی ای او محکمہ صحت بھی موقعہ پر پہنچ گئے  اور فوری طور پر ہسپتال سیل کر کے میاں بیوی ڈا کٹرز پر مقدمہ درج کر کے گرفتار کر لیا ۔
image

 دبئی فیسٹول میں دنیا کی معروف انشورنس کمپنی نے فیسٹول میں شرکت کرنے والوں کیلئے انوکھی پیشکش رکھی ہے جس میں برطانوی شاہی گارڈ کو کھڑا کیا گیا ہے اور آفر دی ہے کہ جو کوئی پندرہ سکینڈ میں اس گارڈ کو ہنسنے پر مجبور کرے گا اس کو لند ن کی سیرکا موقع فراہم کیا جائے گا۔
image

سری لنکا میں نامور برطانوی صحافی جھیل کے کنارے ہاتھ دھونے کے دوران مگر مچھ کا شکار بن گیا۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق 25 سالہ پال مکلین سری لنکا میں چھٹیاں گزارنے گیا تھا جہاں جھیل کے کنارے ہاتھ دھونے کے دوران مگر مچھ نے پال کو جھیل میں کھینچ لیا، واقعہ کے مقام پر موجود مچھیرے کا کہنا ہے کہ برطانوی صحافی کو مگر مچھ گھسیٹتا ہوا جھیل میں لے گیا۔برطانوی صحافی کو جس جگہ مگر مچھ نے نشانا بنایا وہاں مگر مچھوں کی بڑی تعداد موجود ہوتی ہے، مقامی افراد کے مطابق  آخری بار انہوں نے صحافی کا ہاتھ جھیل سے باہر لہراتا ہوا دیکھا تھا اور تھوڑی دیر بعد ہاتھ غائب ہوگیا۔واضح رہے کہ برطانوی صحافی پال مکلین آکسفورڈ یونی ورسٹی سے تعلیم یافتہ ہے اور نامور انگریزی اخبار فائننشل ٹائمز سے وابستہ ہے جب کہ پال نے بریگزیٹ اور یورپی یونین سمیت دیگر مسائل پر رپورٹنگ کی ہے
image

براعظم انٹارکٹیکا کے بارے میں دنیا کو کچھ زیادہ معلوم نہیں اور اس کے اسرار اکثر سائنسدانوں کی نیندیں اڑا دیتے ہیں اور اب ایک بار پھر ایسا ہوا ہے،اب سائنسدانوں نے وہاں یورپی ملک نیدرلینڈ سے بھی زیادہ بڑے ایک پراسرار گڑھے کو دریافت کیا ہے اور وہ جاننے کے لیے بے چین ہیں کہ آخر وہ  کیسے  بن گیا،کینیڈا کی ٹورنٹو یونیورسٹی کے محققین نے برفانی براعظم میں اتنا بڑا گڑھا دریافت کیا اور ان کے مطابق یہ انتہائی حیران کن ہے ،انٹارکٹیکا میں کھلے پانیوں والے حصوں کے ارگرد ایسے برفانی گڑھوں کو پولینیا کہا جاتا ہے اور یہ گڑھا بھی مشرقی انٹارکٹیکا کے ایسے ہی ایک حصے میں دریافت ہوا ہے،یہ گڑھا سب سے پہلے 1970 کی دہائی میں ویڈیل سی میں سیٹلائٹ کے ذریعے دیکھا گیا تھا اور اس سال یہ دوبارہ کھل گیا ہے،سائنسدانوں کے پاس ماضی میں قدرت کے اس طرح کے مظاہر کی تحقیق کے حوالہ سے صلاحیت نہ ہونے کے برابر تھی۔تاہم اب اس حوالے سے ایک نظریہ قائم کرلیا گیا ہے اور سائنسدانوں کے مطابق یہ سمندر بہت زیادہ سرد مگر تازہ پانی کی تہوں سے بھرا ہوا ہے جو کہ گرم اور کھاری ہیں،جب نچلی تہہ سے گرم پانی سطح پر پہنچتا ہے تو برف کو پگھلا دیتا ہے،تاہم سائنسدان اب یہ جاننے کی کوشش کررہے ہیں کہ اس طرح کے گڑھے کب اور کتنے عرصہ میں ابھرتے ہیں اور کہیں یہ موسمیاتی تبدیلیوں کا اثر تو نہیں،ان کا کہنا تھا کہ موسمیاتی تبدیلیوں پر الزام عائد کرنا تو قبل از وقت ہوگا کیونکہ یہ بظاہر موسموں میں قدرتی تبدیلی کا نتیجہ لگتا ہے۔
image

بانس سے بنے گلدان، برتن یا فرنیچر توسب نے دیکھ رکھے ہیں مگر نوریوکی سائتو نامی ایک جاپانی فنکار ایسے بھی ہیں جو بانس سے ایسے حشرات بناتے ہیں کہ دیکھنے والا دنگ رہ جائیں۔ سائتو اپنی مہارت سے حشرات کے ڈیزائن سے لے کر ایک ایک نقش انتہائی نفاست سے بناتے ہیں اور دیکھنے والے کو یہ گمان ہوتا ہے کہ یہ اصلی ہے۔ انہوں نے اس انوکھے فن کی صلاحیت سے تتلی، ٹڈے، مکوڑے اور دیگر کیڑے انتہائی نفاست سے تیار کئے ہیں جن کی تصاویر سوشل میڈیا پر بھی خوب وائرل ہورہی ہیں۔ بانس سے کیڑوں کو بنانے کے لئے سائتو سب سے پہلے ان کا ڈیزائن کسی کاغذ پر بناتے ہیں اور پھر خاص آلے کے ذریعے اسے حقیقت کا روپ دیتے ہیں۔
image

 مشہور فرانسیسی سپہ سالار اور شہنشاہ نپولین بونا پارٹ کے تاج میں نصب سونے سے بنا ہوا پتہ نیلام کرنے کا اعلان کردیا گیا،اپنے پستہ قد کی وجہ سے مشہور اس عظیم سپہ سالار نے بے شمار جنگوں میں فتح حاصل کی، فوج کے ایک معمولی افسر سے لے کر اس پر ایک وقت ایسا  آیا  کہ اس نے پورے فرانس اور  آس پاس کی دیگر ریاستوں پر اپنی حکومت قائم کرلی، اور خود کو شہنشاہ کا خطاب دے ڈالا، 1804 میں پیرس کے نوٹرے ڈیم کیتھڈرل میں پوپ کی موجودگی میں نپولین نے خود ہی اپنی تاج پوشی کی اور خود کو شہنشاہ اور اپنے خاندان کو شاہی خاندان قرار دے ڈالا،وہ دراصل رومی شہنشاہیت سے بے حد متاثر تھا اور اس کا تاج بھی مشہور رومی جرنیل جولیس سیزر سے مشابہ تھا،نپولین نے اپنی تاج پوشی کے وقت جو تاج پہنا وہ بہت بھاری بھرکم اور وزنی تھا، تاج میں سونے سے بنے ہوئے 44 بڑے پتے جبکہ 12 چھوٹے پتے سجائے گئے تھے،اس وقت اس تاج کو 8 ہزار فرانکس میں بنایا گیا تھا ،نپولین نے جب تاج کے وزنی ہونے کی شکایت کی تو تاج میں سے 6 بڑے سونے کے پتوں کو نکال دیا گیا،نپولین کی واٹر لو میں ہزیمت ناک شکست اور اسے قید کردیے جانے کے بعد اس کا تاج تو پگھلا دیا گیا، تاہم سنار کے پاس تاج میں سے نکالے گئے پتے محفوظ تھے،فرانسیسی نیلام گھر اوسینٹ کا کہنا ہے کہ یہ پتہ اسی سنار کے خاندان سے حاصل کیا گیا ہے، اور بقیہ پتوں کے بارے میں ابھی کوئی فیصلہ نہیں کیا گیا کہ ان کا کیا کیا جائے گا۔
image

عوامی سروے

سوال: انتخابی اصلاحات کی منظوری ملک کیلئے فائدہ مند ہو گی یا نقصان دہ؟