17 اگست 2017
تازہ ترین

عوامی سروے

سوال: آپ کے خیال میں کونسی سیاسی یا مذہبی جماعت صحیح معنوں میں نظریہ پاکستان کی محافظ اور عوامی فلاح و بہبود میں اہم کردار ادا کر سکتی ہے؟

جہان سپیشل

 سابق وزیراعظم نواز شریف کی اہلیہ بیگم کلثوم نواز کے حلقہ این اے 120 سے انتخاب لڑنے کیلئے جمع کرائے گئے کاغذات نامزدگی پر پی پی پی اور پی ٹی آئی کی جانب سے لگائے گئے اعتراضات رد کر دیے گئے ہیں اور الیکشن کمیشن نے ان کے کاغذات نامزدگی منظور کر لے ہیں۔کاغذات کی منظوری کے بعد آصف کرمانی نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ بیگم کلثوم نواز کے کاغذات پر 9 اعتراضات عائد کئے گئے تھے جو سب کے سب مضحکہ خیز تھے اور ان کا کوئی سر پیر نہیں تھا، یہ بالکل ویسے ہی اعتراضات تھے جیسے کہ عمران خان اور ان کا ٹولہ 2014 سے ہم پر عائد کر رہا ہے۔ اس موقع پر انہوں نے عمران خان کے آئینے میں عکس تمہارا ہے لیکن آئینہ ہمارا ہےآصف کرمانی نے بتایا کہ ریٹرننگ افسر نے پی ٹی آئی کے تمام اعتراضات اٹھا کر پھینک دیئے ہیں اور ہم ایک بار پھر سرخرو ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جب ریٹرننگ افسر نے ہم سے پوچھا کہ کیا آپ کے بھی کوئی اعتراضات ہیں؟ تو ہم نے کہا نہیں، ہم میدان میں مقابلہ کرنے والے لوگ ہیں۔
image

سپریم کورٹ نے پنجاب اسمبلی کے حلقہ پی پی چار گوجر خان میں17ستمبر کو ہونے والے ضمنی انتخابات روکنے کا حکم دیتے ہوئے ایچ ای سی کو ن لیگ کے سابق رکن صوبائی اسمبلی شوکت عزیز بھٹی کے غیر ملکی ڈپلومہ کی تصدیق کا حکم دیدیا ہے ، جبکہ  شوکت عزیز بھٹی کو بھی اصلی اسناد فراہم کرنے کی ہدایت کردی ہے ، عدالت عظمیٰ نے الیکشن کمیشن کے دائرہ اختیار پر معاونت کے لیے اٹارنی جنرل کو نوٹس جاری کرتے ہوئے کیس کی سماعت اکتوبر کے پہلے ہفتے تک ملتوی کردی ہے، جمعرات کو سابق رکن پنجاب اسمبلی شوکت عزیز کی مبینہ جعلی ڈگری سے متعلق کیس کی سماعت چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے کی دوران سماعت شوکت عزیز بھٹی کے وکیل سردار اسلم نے دلائل دیتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ کاغذات نامزدگی  کے ساتھ بی اے کی ڈگری نہیں لگائی گئی اس پر چیف جسٹس نے کہا کہ  سوال یہ ہے کہ کیا اپیل مقررہ مدت کے اندر فائل کی گئی ، کیا آرٹیکل 225کے تحت کیس الیکشن کمیشن کے پاس جانا چاہئے تھا  کیا روپا سیکشن 103اے اے کے تحت الیکشن کمیشن کا دائرہ اختیار ہے  اس پر ووٹر میجر ریٹائرڈ افتخار کے وکیل سردار لطیف کھوسہ نے موقف اختیار کیا کہ الیکشن کمیشن کے پاس دائرہ اختیار ہے ، اگر مانیٹرنگ صحیح ہوتی تو ایسا نہ ہوتا، تمام نامی نیشن پیپر میں تعلیم بی اے لکھی گئی ، جب پکڑے گئے تو بیان بدل لیا، اس پر چیف جسٹس نے کہا کہ کیس کے تمام نکات کا جائزہ لینا ہوگا، معاملہ ایک کیس کا نہیں اس فیصلے کے اثرات باقی کیسز پر بھی ہوں گے ،  درخواست گزار کے وکیل سردار اسلم ایڈووکیٹ نے کہا کہ عدالت چاہے تو تمام ڈپلومہ جات کی تصدیق کر ا سکتی ہے، چیف جسٹس نے کہا کہ 2007کے نامی نیشن پیپرز میں قابلیت بی اے کے برابر لکھی گئی ہے ، سردار لطیف کھوسہ نے کہا کہ پنجاب اسمبلی کی ویب سائٹ پر تعلیم بی اے لکھی گئی ہے ،  فریقین کے وکلائ کے دلائل سننے کے بعد عدالت عظمیٰ نے حلقہ پی پی 4 میں ضمنی انتخابات روکنے کا حکم دیتے ہوئے حتمی فیصلے تک شوکت عزیز بھٹی کی نااہلی  سے متعلق الیکشن کمیشن کا فیصلہ برقرار  رکھا ہے جبکہ ایچ ای سی کو شوکت عزیز بھٹی کی غیرملکی ڈپلومہ کی تصدیق کرنے کا حکم دیتے ہوئے شوکت عزیز کو ایچ ای سی کو اصل اسناد فراہم کرنے کی ہدایت کر دی ہے ، عدالت نے الیکشن کمیشن کے اختیارات پر معاونت کیلئے اٹارنی جنرل کو نوٹس جاری کرتے ہوئے کیس کی سماعت اکتوبر کے پہلے ہفتے تک ملتوی کردی ہے ۔ 
image

چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ ماڈل ٹائون کے بے گناہوں کا خون شریف برادران کے گلے کا پھندا بن جائے گا، خوشی ہے نواز شریف کو تیس سال بعد نیا پاکستان بنانے کا خیال آہی گیا،  بلاول بچہ ہے کہیں مانسہرہ کے جلسے میں رو ہی نہ پرے۔   جمعرات کو پارٹی ورکرز سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ نواز شریف مکافات عمل کا شکار ہیں  ۔ 
image

مسلم لیگ ق کے صدر چودھری شجاعت حسین نے نواز شریف کے مہم کو عدلیہ مخالف قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ نیشنل ڈائیلاگ 2018الیکشن سے پہلے بھی ہوسکتا ہے لیکن آرٹیکل 62اور63پر کمپرومائز نہیں کیا جائے گا جبکہ مسلم لیگ کے تمام دھڑوں  کو ملاکر بھر پور سیاسی قوت دکھائیں گے ۔ غوث علی شاہ و دیگر  کے ساتھ میڈیا سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ نوازشریف اپنے کارناموں کے باعث نااہل ہوئے تو اب انہوںنے عدلیہ کے خلاف زہر اگلنا شروع کر دیا ہے اور دوسرے  لوگوں کو بھی عدالتوں کے فیصلے نہ ماننے کی ایک قسم کی تلقین کر رہے ہیں جو کسی بھی طور قابل قبول نہیں، آئین میں تبدیلی نواز شریف خود کو بچانے کیلئے کرنا چاہتے ہیں اگر یہ ملک کے مفاد کو عزیز رکھتے تو آرٹیکل 62اور63بہت بعد کی چیزیں ہیں وہ پہلے آئینی ترمیم کے ذریعے تعلیم کو وفاق کے حوالے کرکے کیونکہ تعلیم کا شعبہ صوبوں کو دے کر ان کا عملاً بیڑا غرق کر دیا گیا ہے  ، ہم مسلم لیگ کے تمام دھڑوں کو ملانے کی کوشش کر رہے ہیں تاکہ اپنی بھرپور سیاسی قوت دکھائے جبکہ موجودہ حالات میں بھی نیشنل ڈائیلاگ ہوسکتا ہے  ۔ 
image

 تحریک انصاف کی این اے120کی امیدوار یاسمین راشد کے کاغذات نامزدگی منظور کرلئے گئے ۔ تفصیلات کی مطابق جمعرات کے روز تحریک انصاف کی این اے120کی امیدوار ڈاکٹر یاسمین راشد کے کاغذات نامزدگی الیکشن کمیشن نے منظور کرلئے ، پیپلزپارٹی کے امیدوار فیصل میر نے یاسمین راشد سے متعلق اعتراضات واپس لے لئے، کاغذات منظور ہونے کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے یاسمین راشد نے کہا کہ ہم نے بیگم کلثوم نواز کے کاغذات پر25اعتراضات لگا کر الیکشن کمیشن سے مسترد کرنے کی استدعا کی ہے تاہم  فیصلہ الیکشن کمیشن نے کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کلثوم نواز نے اقامہ کاغذات کے ساتھ لگایا ہے لیکن نوازشریف کی طرح انہوں نے بھی تنخواہ ظاہر نہیں کی، کلثوم نواز نے اقامہ نوازشریف کی وجہ سے لیا اور وہ سعودی عرب میں ایف زیڈ ای کی ڈپٹی چیئرمین تھیں ، ہم ووٹ خریدتے نہیں بلکہ مانگتے ہیں ۔ 
image

راولپنڈی کی احتساب عدالت نے سابق صدر اور پاکستان پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری کے خلاف زیر التوا آخری کرپشن ریفرنس کی روزانہ سماعت کا فیصلہ کرلیا۔ احتساب عدالت سابق صدر کے خلاف روزانہ کی بنیاد پر مبینہ طور پر پاکستان اور بیرون ملک غیر قانونی اثاثے رکھنے کے حوالے سے ریفرنس کی سماعت کرے گی۔ یہ ریفرنس پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین اور ان کی مرحوم اہلیہ بے نظیر بھٹو پر غیر قانونی ذرائع سے جائیداد بنانے کے الزام پر دائر کیا گیا تھا۔ آصف زرداری اور بے نظیر بھٹو کے خلاف یہ ریفرنس 2001 میں احتساب عدالت میں دائر کیا گیا تھا، جو بعد ازاں اس وقت کے صدر  پرویز مشرف کی جانب سے جاری کردہ قومی مفاہمتی آرڈیننس کے تحت 2007 میں بند کر دیا گیا۔ دسمبر 2009 میں سپریم کورٹ نے این آر او کو کالعدم قرار دے دیا اور اس آرڈیننس کے تحت بند کئے جانے والے تمام کیسز کو دوبارہ کھولنے کا حکم دیا۔ آصف علی زرداری اس وقت صدر پاکستان کے عہدے پر فائز تھے جس کی وجہ سے انہیں آئین کے آرٹیکل 248 کے تحت استثنیٰ حاصل تھا۔ قومی احتساب بیورو نے  آصف زرداری کے خلاف ریفرنس کو اپریل 2015 میں دوبارہ کھولنے کا فیصلہ کیا جس کے بعد سے اس ریفرنس پر کارروائی سست روی کا شکار تھی تاہم وکیل دفاع اور وکیل استغاثہ دونوں ہی اس کیس کی پوری قوت کے ساتھ مزید پیروی کرنے کے خواہش مند نہیں ہیں۔ اس کیس میں رواں سال اب تک کوئی پیش رفت دیکھنے میں نہیں آئی کیونکہ آصف علی زرداری کے وکیل اپنی بیماری کی وجہ سے کیس کی پیروی کرنے سے قاصر تھے۔ پاناما پیپرز کیس کے فیصلے کے بعد آصف علی زرداری کے وکیل فاروق ایچ نائیک نے بھی اپنی حاضری کو یقینی بنایا اور احتساب عدالت نے نیب کے ساتھ مشاورت کرتے ہوئے روزانہ کی بنیاد پر سابق صدر کے خلاف ریفرنس کی سماعت کا فیصلہ کیا۔ رواں سال کے آغاز میں یہ بات سامنے آئی کی کرپشن ریفرنس کا ایک اہم گواہ پر اسرار طور پر غائب ہوگیا تھا، بعد ازاں بیرسٹر جواد مرزا نامی گواہ کو راولپنڈی احتساب عدالت سے اشتہاری ملزم قرار دے دیا گیا تھا۔ بیرسٹر جواد مرزا 2002 میں نیب کے فنانشل کرائم انویسٹی گیشن ونگ کے قانونی مشیر تھے جنہوں نے نیب میں دستاویزی شواہد تفتیشی افسر کو فراہم کئے تھے جن میں زرداری خاندان کے پیسوں کی لین دین، بینک اکائونٹس اور آف شور کمپنیوں کی معلومات موجود تھیں۔ نیب کے وکیل طاہر ایوب نے بتایا کہ یہ کیس اپنے اختتامی مراحل میں ہے اور عدالت نے اس کی روزانہ کی بنیاد پر پیروی کرنے کا فیصلہ کیا۔انہوں نے امید ظاہر کی کہ اس کیس کی کارروائی آئندہ چند دنوں میں مکمل ہو جائے گی اور جلد ہی عدالت اس کیس کا فیصلہ سنا دے گی۔ واضح رہے کہ سابق صدر آصف علی زرداری کے خلاف کرپشن کے 6 مقدمات دائر تھے تاہم اپنے عہدے کی مدت پوری کرنے کے بعد احتساب عدالت میں ان کیسز کے حوالے سے کارروائی ہوئی جس میں سے 5 کیسز میں انہیں بری کر دیا گیا تھا۔
image

 تفصیلات کے مطابق دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ سہیل محمود نے بھارت میں پاکستان کے ہائی کمشنر کے عہدے کا چارج سنبھال لیا ہے، رواں  ماہ قبل از وقت ریٹائرمنٹ لینے والے عبدالباسط کی جگہ سہیل محمود کو پاکستانی ہائی کمشنر تعینات کیا گیا ہے،انہوں نے 1985 میں فارن سروس جوائن کی اور اس سے قبل ترکی میں بطور پاکستانی سفیر فرائض انجام دے رہے تھے،اس  سے قبل سہیل محمود دفتر خارجہ میں ایڈیشنل سیکریٹری کے ذمہ داریاں نبھا رہے تھے،یاد رہے کہ اس سے قبل سہیل محمود 2005 سے 2009 کے دوران ڈائریکٹر جنرل، 1995 سے 1998 تک ڈائریکٹر اور1986 سے1991 تک سیکشن افسر کے طور پر بھی فرائض انجام دے چکے ہیں۔
image

 وزیر داخلہ احسن اقبال نے کہا ہے کہ ملکی تاریخ شاہد ہے کہ جمہوری نظام کو پنپنے نہ دے کر ترقی کا گلا گھونٹا گیا، معاشی استحکام کے بغیر دیرپا ترقی نہیں آ سکتی ، ترقی و خوشحالی کو اپنا مقدر بنانے کے لئے مثبت سوچ کے تحت عملی کام کرنا ہو گا ۔ پلاننگ کمیشن آف پاکستان کے زیر اہتمام ڈیویلپمنٹ سمٹ اور ایکسپو  کے افتتاح کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ  ہمارے بزرگوں نے ناممکن خواب کو تعبیر دے کر پاکستان حاصل کیا ، آزادی کے بعد کاغذ جوڑنے کے لئے کامن پن تک نہیں تھیں   اور آج 70 سال کی نشیب و فراز دیکھنے کے بعد اپنا ایک مقام حاصل کر چکے ہیں ، ترقی کا یہ سفر بعض لوگوں نے ڈی ریل کیا اور یہی وجہ ہے کہ  آج ہم ترقی میں ان ممالک سے بھی پیچھے رہ گئے جن کا قیام ہمارے بعد ہوا تھا ۔ افغانستان جیسے ملک میں  کبھی جمہوری نظام کو نہ چھیڑا گیا اور آج وہ بھی  ہم سے آگے نکلنے کے لئے کوشاں ہیں  جو ہمارے لئے ایک زندہ مثال ہے ، جب بھی مثبت سوچ کے تحت ترقی کا سفر شروع کیا گیا تو جمہوری نظام کو ڈی ریل کیا گیا ہمارے ایک بھی وزیر اعظم کو اپنی مدت نہیں پوری کرنے دی گئی اور یہی وجہ ہے کہ ترقی میں ہماری رفتار خطے کے دیگر ممالک کی نسبت کم ہے ۔ اس موقع پر ڈپٹی چیئرمین پلاننگ کمیشن سرتاج عزیز نے اپنے خطاب میں کہا کہ حالیہ دور میں  پاکستان کی ترقی اپنی مثال آپ ہے لیکن بے روزگاری، مہنگائی، دہشت گردی اور دیگر سنگین مسائل کا حل نکالنے کے لئے ہمیں کھلے ذہن کے ساتھ ماضی سے سیکھنا ہو گا اور اگر ہم نے ماضی سے سیکھا تو ہمارے بیشتر مسائل خود بخود حل ہو جائیں گے ۔ 
image

شہباز شریف نے جی ٹی روڈ ریلی پر سرکاری وسائل خرچ کئے، نا اہل قرار دیا جائے، لاہور ہائیکورٹ میں وزیراعلٰی پنجاب کی نااہلی کی درخواست دائر کردی گئی،لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس عابد عزیز شیخ نے درخواست کی سماعت کی، درخواست گزار نے موقف اختیار کیا  ہے کہ وزیراعلیٰ شہباز شریف نے نوازشریف کی ریلی پر سرکاری اخراجات کئے، لہٰذا عدالت سے استدعا ہے کہ آئین کی خلاف ورزی پر شہباز شریف کو نا اہل قرار دیا جائے، جس پر ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل بیرسٹر خالد وحید کا کہنا تھا کہ درخواست ناقابل سماعت ہے، ریلی پر سرکاری خزانے سے رقم خرچ نہیں کی گئی، عدالت نے درخواست کے قابل سماعت ہونے سے متعلق دلائل طلب کر لئے۔
image

 پاک فضائیہ کا ایف سیون پی جی طیارہ معمول کی تربیتی پرواز کے دوران سرگودھا کے قریب گر گیا، طیارے میں ایک پائلٹ سوار تھا، ترجمان پاک فضائیہ کے مطابق  پاک فضائیہ کا تربیتی طیارہ  پرواز کے دوران سرگودھا کے قریب گر کر تباہ ہوگیا، ایف سیون پی جی طیارہ معمول کی پرواز پر تھا، طیارے میں ایک ہی پائلٹ سوار تھا۔ پاک فضائیہ نے علاقے میں سرچ اور ریسکیو آپریشن شروع کردیا
image

سید صلاح الدین کا کہنا تھا کہ ٹرمپ انتظامیہ نے حزب المجاہدین پر پابندی مودی کو خوش کرنے کے لیے لگائی گئی ہے، ہماری جماعت مقبوضہ جموں و کشمیر کی مقامی تنظیم ہے۔ سید صلاح الدین کا یہ بیان اس وقت سامنے آیا جب امریکہ محکمہ خارجہ نے اپنی ویب سائٹ پر حزب المجاہدین کو ایک دہشت گرد تنظیم قرار دے کر ان پر پابندی لگا دی ہے ۔ سید صلاح الدین کا کہنا ہے کہ امریکہ کا حزب المجاہدین کو دہشت گرد تنظیم قرار دینا افسوس ناک ہے، ٹرمپ انتظامیہ نے پابندی لگا کر عالمی قوانین اور اقوام متحدہ کے چارٹر کو پامال کیا۔
image

 سابق وزیراعظم میاں محمد نواز شریف نے آرٹیکل62,63میں ترمیم کی حمایت پر  مولانا فضل الرحمن کی معذرت  کو قبول کرنا   سابق صدر آصف علی زرداری سے صلح کرانے  سے مشروط کر دیا ہے۔ مولانا فضل الرحمن نے بھی سینہ ٹھاپتے ہوئے بہت بعد اچھے نتائج دینے کا وعدہ کر لیا۔ انتہائی معتبر ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ جمعیت علمائ اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے نواز شریف سے ملاقات کے دوران آرٹیکل62,63میں ترمیم کی حمایت کرنے میں معذرت کرتے ہوئے موقف دیا ہے کہ پارٹی اور ہمار اووٹ بینک اس بات پر راضی نہ ہو گا اور آئندہ الیکشن میں جے یو آئی ف کو سخت نقصان ہو سکتا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ میاں نواز شریف نے مولانا فضل الرحمن کی معذرت قبول کرتے ہوئے کہا ہے کہ دوستی کا حق بھی آپ بخوبی نبھاتے ہیں آپ حمایت نہ کریں مجھے دکھ نہ ہو گا مگر سابق صدر آصف علی زرداری آپ کے بہت ہی قریب ہیں اور وہ آپ کی بات ٹالتے بھی نہیں ہیں۔ لہذا ان سے صلح کروا دیں اور آئین میں ترمیم کی حمایت بھی مل جائے ،مولانا فضل الرحمن نے نواز شریف کو یقین دلایا کہ دوستی نبھانے کے لئے وہ ضرور سابق صدر سے بات کریں گے اور امید ہے کہ وہ مان جائیں گے۔ذرائع کے مطابق مولانا فضل الرحمن نے بدھ کو آصف علی زرداری سے ابتدائی رابطہ بھی کر لیا ہے۔ آج یا جمعہ کو  خفیہ  ملاقات بھی متوقع ہے
image

 امریکا نے مقبوضہ کشمیر میں سرگرم حزب المجاہدین کو دہشت گرد تنظیم قرار دیدیا، امریکی محکمہ خارجہ کی ویب سائٹ کے مطابق حزب المجاہدین کو غیر ملکی دہشت گرد تنظیموں کی فہرست میں شامل کرلیا گیا۔ نجی ٹی وی  کے مطابق امریکہ محکمہ خارجہ کی ویب سائٹ کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں سرگرم حزب المجاہدین کو دہشت گرد تنظیم قرار دیدیا جس کے بعد اس تنظیم کے امریکہ میں موجود اثاثے بھی منجمند کر دیے گئے ، اس کے علاوہ امریکی شہریوں پر حزب المجاہدین سے کسی بھی لین دین پر پابندی ہوگی۔ دو ماہ قبل امریکہ نے حزب اللہ کے چیف سید صلاح الدین کو عالمی دہشت گرد قرار دیا تھا۔
image

عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید کا پاکستان عوامی تحریک کے جلسے میں خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ یہاں ہر بات پر نوٹس لیا جاتا ہے مگر ماڈل ٹائون کے 14 شہدا کا نوٹس کیوں نہیں لیا گیا؟ نواز شریف کے طرز حکمرانی کی وجہ سے ہمارے غریب لوگ اپنے بچے اور گردے بیچنے پر مجبور ہیں۔ موجودہ نظام کو نواز شریف سے خطرہ ہے۔ شیخ رشید کا نواز شریف کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہنا تھا کہ یہ کس منہ سے نظر ثانی کی اپیل کر رہے ہیں؟ نواز شریف مجھے کہتے تھے کہ تم اسمبلی میں نہیں رہو گے، نواز شریف نے دس سال ضیا ئ کی گود میں گزارے جبکہ یہ نظام نواز شریف کی وجہ سے خطرے میں ہے اور اگر نظام کو کچھ ہوا تو اس کے ذمہ دار نواز شریف ہو ں گے۔ اعجازالحق کو حرفی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ آپ ان کے ساتھ بیٹھے ہیں اور یہ آپ کے باپ کے بارے اتنی غلط باتیں کر رہے ہیں آپ کو تو چاہیے تھا کہ آپ ان سے علیحدگی کا اعلان کر دیتےالیکشن کمیشن کارروائی کر رہا ہے ، ہائی کورٹ نے نوازشریف کی پارٹی صدارت کے خلاف درخواست نمٹا دسربراہ عوامی مسلم لیگ کا کہنا تھا کہ ہم سی پیک کے ساتھ ہیں مگر چور بازاری نہیں چلنے دیں گے، ہماری معیشت تباہ کر دی گئی۔ ان کا کہنا تھا کہ وہ وقت دور نہیں جب یہ دونوں بھائی حدیبیہ کیس میں جیل کی سلاخوں کے پیچھے ہوں گے۔
image

 پنجاب کے صوبائی وزیر قانون رانا ثنائ اللہ نے کہا ہے کہ سانحہ ماڈل ٹائون کے حوالے سے عدالت میں بیان کئے گئے حقائق کو عوامی تحریک ثابت نہیں کر سکی ، طاہر القادری چوکوں اور چوراہوں میں اشتعال انگیز تقاریر اور حقائق کے برخلاف بیانات دے رہے ہیں ، عوامی تحریک کو پنجاب حکومت نے پیش کش کی تھی کہ وہ مسجد یا عوامی تحریک کے مرکز میں قائم گوشہ درود رکھ لیں اس میں ہم بھی آجاتے ہیں اور عوامی تحریک کا وفد بھی آجائے قرآن پاک پر ہاتھ رکھ کر آپ بھی اصل حقائق بیان کریں اور ہم بھی اپنا بیان دیں گے اس کے بعد دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہو جائے گا لیکن ہماری اس پیشکش کو انہوں نے رد کر دیا۔ وزیر قانون کا مزید کہنا تھا کہ سانحہ ماڈل ٹأن کے حوالے سے قائم انکوائری کمیشن کے تقریر کو عوامی تحریک کے وکلائ نے چیلنج کیا ہوا ہے اور اس حوالے سے عوامی تحریک کا مقدمہ عدالت میں زیر سماعت ہے، انکوائری ایکٹ کے تحت کمیشن کی رپورٹ کو پبلک کر نا حکومت کا صوابدیدی ایکٹ ہے جبکہ معاملہ عدالت میں ہے اور حکومت پنجاب اسے اب پبلک نہیں کر سکتی۔ نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے وزیر قانون پنجاب رانا ثنائاللہ کا کہنا تھا کہ سانحہ ماڈل ٹأن کے حوالے سے زیر سماعت کیس میں عدالت نے آئی جی پولیس سے لے کر کانسٹیبل تک 126پولیس ملازمین کو عدالت نے طلب کیا او ر ان سے جرح ہوئی جبکہ عدالت نے نامزد 16سیاسی شخصیات کو عدالت نے بری کر دیا تھا ۔ طاہر القادری کی ایف آئی اور چوکوں ، چوراہوں میں دیئے جانے والے بیانات میں تضادات ہیں ، سانحہ ماڈل ٹائون کے روز قادری ساری رات اپنے لوگوں کو ٹیلی فون پر بھڑکاتے رہے اور پولیس کے خلاف بیان دینے کے لیے بھڑکاتے رہے۔ انکوائری کمیشن کی جس رپورٹ کو پبلک کرنے کی وہ ڈیمانڈ کر رہے ہیں اس کو ان کے لوگوں نے خود عدالت میں چیلنج کیا ہوا ہے ، اب عدالت کے ججز کا اختیار میں ہے وہ جو فیصلہ کریں گے ہمیں قبول ہوگا۔
image

ملی مسلم لیگ کے سربراہ سیف اللہ خالد نے کہا ہے کہ ملی مسلم لیگ کی سیاست کا محور نظریہ پاکستان ہے ، دینی و سیاسی جماعتوں کی جانب سے اس نظریے سے دوری ہمیں سیاست میں کھینچ لائی، اسلام اور پاکستان سے محبت کرنے والے ہمارے شانہ بشانہ نظر آئیں گے، اب اس ملک میں ڈرٹی پالیٹکس کی کوئی گنجائش نہیں ، ہم سیاست کے اس چلن کو بدلنے آئے ہیں ، ہماری سیاست سے محب وطن قوتوں کو خوفزدہ ہونے کی ضرورت نہیں، ہم توڑنے نہیں دلوں کو جوڑنے آئے ہیں، تیس برس تک کوتاہیوں کی نشاندہی کرتے رہے، کسی کے کان پر جوں تک نہیں رینگی ، مجبور ہوکر میدان سیاست میں قدم رکھنا پڑا، ماضی کی ہماری خدمات ہی ہمارا اصل چہرہ ہے، جس سے قوم بخوبی آشنا ہے۔  جہا ن پاکستان کو خصوصی انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ نظریہ پاکستان  کی حفاظت در اصل پاکستان کی حفاظت ہے،  تیس سال تک خاموشی سے دعوت و خدمت کے کام سے جڑے رہے، غلطیوں کی نشاندہی کرتے رہے لیکن سیاستدان اور حکمران ان غلطیوں کو سدھارنے کے لیے کبھی تیار نظر نہ آئے ، اسی چیز نے ہمیں مجبور کر دیا کہ اب میدان سیاست بھی خالی نہ چھوڑا جائے، پاکستان میں ہمیں کبھی مخالفت کا سامنا کرنا پڑا نہ کرنا پڑے گا ، ہماری مخالفت ہمیشہ بیرونی قوتوں نے کی ، ہمیں پاکستان دشمن قوتوں کے پروپیگنڈے کی کوئی پروا نہیں، قائد اعظم کے وارث اور نظریہ پاکستان کے امین کہلانے والے حکمران دشمن بھارت سے دوستی کی پینگیں بڑھاتے رہے، مودی کو ذاتی تقریبات میں بلاتے رہے، اس قسم کی کرتوتوں نے ہمارے سینے زخمی کئے۔ ایسی قباحتوں کا راستہ روکنے کے لیے ہمارا سیاست میں آنا ضروری تھا ۔ انہوں نے کہا کہ  ہم نے اس ملک میں پارٹی بازی کی سیاست نہیں کرنی، ہم نے توڑ پھوڑ کی ڈرٹی پالیکٹس کو بھی آگے نہیں بڑھانا، ہم نے مفاد پرستی کی سیاست بھی نہیں کرنی، ہم نے فرقہ بندی کی سیاست نہیں کرنی، ہم نے توڑنے کی سیاست نہیں کرنی بلکہ جوڑنے کی سیاست کرنی ہے، ہم نے اتحاد و یگانگت کے نئے گل کھلانے ہیں، ہماری مشاورت کا عمل مسلسل جاری ہے، اس عمل میں ہم نے یہ طے کیا ہے کہ ہمارے لیے تمام محب وطن سیاسی و مذہبی قوتیں قابل احترام ہیں، کسی کو ہم سے خوفزدہ ہونے کی ضرورت نہیں، ہم نے اپنے منشور پر عمل کرنا ہے، لوگوں کو اپنی جانب متوجہ کرنا ہے۔ بات نظریہ پاکستان کی ہو ، دفاع ِ پاکستان کی ہو ، تحفظ ِ پاکستان کی ہو یا مسئلہ کشمیر کی ، ہر حوالے سے ہمارے پاس اللہ کے فضل و کرم سے ایسا منشور ہے جو لوگوں کے دلوں کی حقیقی ترجمانی کرے گا۔ جس سینے میں پاکستان اور اسلام کی محبت ہے وہ ہمارے شانہ بشانہ نظر آئے گا۔ ہماری سیاست کی بنیاد کل بھی اتحاد تھی اور آج بھی اتحاد ہے۔ یہ ایک کٹھن کام ہے ، میں جو باتیں آپ کے سامنے کر رہا ہوں مجھے اس بات کا بخوبی اندازہ ہے کہ انہیں عملی جامہ پہنانے کے لیے کس قدر محنت کرنا پڑے گی، آپ یہ بھی تو دیکھیں کہ اللہ تبارک و تعالیٰ نے ہمیں تیس سال کا ایک تجربہ دیا ہے جو اس بات کا گواہ ہے کہ ہم نے بڑی بڑی مشکلات سے نمٹنا سیکھ رکھا ہے۔ پاکستان کی سیاست تو بہت آسان کام ہے، ہم نے بانی پاکستان حضرت قائد اعظم محمد علی جناح کے مشن کو آگے بڑھانا ہے، ہم نے وہ منشور پیش کیا ہے جو1973  کے آئین کی روح ہے۔ اللہ کی مدد اور غیرت مند پاکستانیوں کا ساتھ ہمیں میسر ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ ہم کسی خاص مسلک ، گروہ یا فرقے کی بنیاد پر سیاست میں نہیں آئے اس لیے ہماری جماعت کسی کے لیے تھریٹ نہیں۔ ہم نے تو سیاست ہی نظریہ پاکستان پر کرنی ہے جس سے کسی مسلک یا مکتبہ فکر کو اختلاف نہیں، ہمارے ساتھ بریلوی ، دیو بندی ، اہلحدیث اور اہل تشیع مکتبہ فکر سے تعلق رکھنے والے احباب شامل ہیں، بڑے بڑے گدی نشین ہماری جماعت کا حصہ ہیں، ہم قومی سیاست کرنے جارہے ہیں ، جو سیاست تقسیم کرتی ہے اس کی نفی کریں گے۔  
image

  لاہور   آئی این پی  وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے کہا ہے کہ ہم کسی کے ساتھ محاذ آرائی نہیں چاہتے، عوام کا فیصلہ قبول کریں گے، تبدیلی ووٹ کے ذریعے ہی آنی چاہیے، ووٹ کی طاقت کو تسلیم کرنا ہو گا، ملک میں ٹیکنو کریٹس کی حکومت کی کوئی گنجائش  نہیں۔   تقریب سے خطاب کرتے ہوئے خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ پاکستان ریلوے کو بہتر سے بہتر بنانے کےلئے دن رات کوشاں ہیں، ریلوے ملازمین سروس بہتر بنانے کےلئے سخت محنت کر رہے ہیں، آزادی ٹرین پورے ملک میں جائے گی، ریلوے کو آگے لے جانے کےلئے ہر ممکن اقدام اٹھائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ   سی پیک کے ریلوے کے حوالے سے منصوبے جلد شروع ہونے والے ہیں ، سی پیک منصوبوں کے ذریعے ٹرین لاہور سے کراچی11 گھنٹے  میں پہنچے گی ۔ سعد رفیق نے کہا کہ پاکستان میں اب اشرافیہ کی بجائے عام آدمی کا فیصلہ ماننا پڑے گا ، تبدیلی ووٹ کے ذریعے ہی آنی چاہیے، ووٹ کی طاقت کو تسلیم کرنا ہو گا، ملک میں ٹیکنو کریٹس کی حکومت کی کوئی گنجائش نہیں 
image

مسلم لیگ ق  کے صدر چودھری شجاعت حسین نے توقع ظاہر کی ہے کہ ان کی کوششوں سے  مسلم لیگی جماعتوں کا اتحاد تشکیل پا جائے گا جو ملک کی  نازک سیاسی صورت حال میں  اپنا کلیدی کردار ادا کر سکے گا ۔ صحافیوں سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ موجودہ وقت سیاسی قیادت کی تقسیم در تقسیم کا نہیں بلکہ آپس میں اتحاد و اتفاق کا  ہے تاکہ ملک کو درپیش مسائل سے باہمی مشاورت اور حکمت عملی سے نمٹا جا سکے ، غوث علی شاہ ، پیر پگاڑا اور دیگر لیگی رہنمائوں سے ملاقاتوں میں مسلم لیگیوں کا آپس میں اتحاد تشکیل پانے کا امکان ہے جو ناقص سیاسی صورت حال میں انتہائی  اہم سیاسی پیش رفت اور کامیابی ہو گی ۔  
image

 چین پاکستان اقتصادی راہداری کے بارے  پارلیمانی کمیٹی کے چیئرمین سینٹر مشاہد حسین سید نے کہا ہے کہ اقتصادی راہداری ایک متفقہ قومی منصوبہ ہے، تمام شراکت دار سی پیک  منصوبوں کی بروقت تکمیل یقینی بنانے کیلئے پرعزم ہیں، سی پیک سے متعلق مختلف شعبوں میں50ہزار سے زائد نوجوانوں کوملازمت دی گئی ہے۔ ایک انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ ملک میں تمام شراکت دار چین پاکستان اقتصادی راہداری کے منصوبوں کی بروقت تکمیل یقینی بنانے کیلئے پرعزم ہیں۔مشاہدحسین سید نے کہاکہ چین پاکستان اقتصادی راہداری کے تحت توانائی کے گیارہ منصوبوں پر عمل درآمد کیا جارہاہے جس سے قومی گرڈ میں دس ہزار میگاواٹ بجلی شامل ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ پورٹ قاسم بجلی گھر، تھرکول، سکھر ملتان موٹروے، گوادرکی بندرگاہ اور ریل کی پٹڑیوں کی بہتری سمیت متعدد منصوبے مقررہ مدت سے پہلے مکمل ہونگے۔مشاہدحسین سیدنے کہاکہ ملک میں چین پاکستان اقتصادی راہداری سے متعلق مختلف شعبوں میں50ہزار سے زائد نوجوانوں کوملازمت دی گئی ہے۔
image

لوئر دیر میں ریمورٹ کنٹرول بم دھما کے میں امن کمیٹی کے ممبر طوطی رحمان سمیت 4 افراد زخمی ہوگئے ۔ پولیس کے مطابق میدان کے علاقے سوری پائو میں امن کمیٹی کے ممبر طوطی رحمان کی گاڑی پر ریموٹ کنٹرول بم حملہ کیا گیا  ، زخمیوں کوٹی ایچ کیو ہسپتال لال قلعہ منتقل کر دیا گیا ہے۔ پولیس  کا کہنا تھا  کہ حملے کے وقت طوطی رحمان کی گاڑی گائوں سے بازار کی جانب آرہی تھی ۔ حملے کے بعد ملزمان فرار ہوگئے ۔ واقعے کے بعد سیکورٹی فورسز نے علاقے میں آپریشن شروع کر دیا ۔
image

وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف   نے ملتان انسٹی ٹیوٹ آف کڈنی کا دورہ کیا اور  مریضوں کی عیادت کی مریضوں کی جانب سے ادویات کی مفت فراہمی نہ  ہونے  کی شکایت پر اظہار برہمی کرتے ہوئے سو فیصد مریضوں کو ادویات مفت  فراہم کرنے کی ہدایت کی اور کہا کہ جن مریضوں کو باہر سے دوائی لینا پڑی ہے ہسپتال انتظامیہ انہیں پیسے واپس کرے، جدید ترین ہسپتال بنانے کا یہ مقصد نہیں کہ مریضوں کو اپنی جیب سے ادویات خریدنی پڑیں،  وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے  ملتان انسٹی ٹیوٹ آف کڈنی کا دورہ کیا اور مریضوں کی عیادت ک،۔  انہوں نے مریضوں سے علاج کی سہولتوں کے بارے میں دریافت کیا جبکہ بعض مریضوں کی جانب سے ادویات کی مفت فراہمی نہ  ہونے  کی شکایت پر اظہار برہمی کیا، انہوں نے کہا کہ  میں ہسپتالوں کی انتظامیہ کا نہیں غریبوں کا نمائندہ ہوں، حکومت کی طرف سے فنڈز میں کمی نہیں آنے دی جارہی ، مریضوں کو مفت ادویات نہ ملنے کی صورتحال  برداشت نہیں کروں گا،  اس موقع پر نئے  ہسپتال کی دیوار میں سیلن آنے پر ایس ایٴ ایس ڈی اور متعلقہ عملہ معطل کردیا گیا،  وزیراعلیٰ پنجاب نے معائنہ ٹیم سے انکوائری کروانے کا حکم دیدیا جبکہ  انہوں نے مریضوں کی قطاروں کا نوٹس بھی لیا، ناقص کارکردگی پر ایکسیئن بلڈنگ اور ایس ڈی او بلڈنگ کو معطل کر دیا گیا
image

چیئرمین نیب قمر زمان چودھری کی زیر صدارت نیب ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں مجموعی طور پر 11 کیسز کی انکوائریوں کا فیصلہ کر لیا تھا، جس میں 6شوگر ملوں کے خلاف انکوائریاں بھی شامل ہیں۔ نجی ٹی وی نے دعویٰ کیا ہے کہ نیب اجلاس میں نواز شریف اور ان کے خاندان کے خلاف ریفرنس دائر کرنے کے فیصلے کا امکان ہے ۔  تفصیلات کے مطابق قومی احتساب بیورو کے چیئرمین کی زیر صدارت ایگزیکٹو بورڈ کا اجلا س مرکزی دفتر میں منعقد کیا گیا جس میں فیصلہ کیا گیا کہ مجموعی طور 11کیسوں کی انکوائریاں شروع کی جائیں جس میں شوگر ملوں کے خلاف 6انکوائریاں بھی ایجنڈے میں شامل کی گئی ہیں ۔ نیب اعلامیہ کے مطابق 6شوگروں ملوں میں پی ایم کے شوگر ملز کراچی، ایم ایس سری شوگر مل کراچی ، ایم ایس تاندلیانوالہ شوگرمل ، ایم ایس حفیظ وقاص لاہور شوگرمل، ایم ایس عبداللہ شوگرمل لاہور اور ایم ایس عبداللہ شوگر مل دیپالپور شامل ہیں ۔ نجی ٹی وی کے ذرائع نے دعویٰ کیا ہے کہ نیب اجلاس میں نوازشریف کے اہلخانہ کیخلاف حدیبیہ ریفرنس سے متعلق حتمی فیصلے کئے جانے کا امکان ہے۔
image

وفاقی وزارت داخلہ نے پانامہ کیس کی تحقیقات کرنے والی جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیائ اور ارکان کو اسلام آباد سے باہر بھی سیکیورٹی کی فراہمی کیلئے صوبائی حکومتوں کو خطوط لکھ دیئے۔ منگل کو ذرائع کے مطابق انٹیلی جنس اداروں نے جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیائ اور ارکان میں  بلال رسول، عرفان منگی اور عامر عزیز کو دوران نقل و حرکت سیکیورٹی کو یقینی بنانے کی ہدایت کی ، جس پر وزارت داخلہ نے  اسلام آباد سے باہر جانے کی صورت میں تمام صوبائی حکومتوں کو واجد اور ان کی ٹیم کے دیگر ارکان کو فول پروف سیکیورٹی فراہم کرنے کی ہدایت کی ہے۔ 
image

 وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے پانچ خصوصی معاونین کا تقرر کیا ہے۔ وزیر اعظم آفس کی طرف سے جاری بیان کے مطابق وزیر اعظم نے بیرسٹر ظفر اللہ خان ، مفتاح اسماعیل خان، ڈاکٹر آصف کرمانی ، ڈاکٹر مصدق ملک اور خواجہ ظہیر احمد کو معاونین خصوصی مقرر کیا ہے۔ دریں اثنا وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ پولیو کا خاتمہ ہماری آئندہ نسلوں کی بقا کا معاملہ ہے پولیو کے خاتمے کے لئے کئے گئے اقدامات کا خود جائزہ لوں گا۔  وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کی زیر صدارت پولیو کے خاتمے سے متعلق اجلاس ہوا جس میں انسداد پولیو ٹاسک فورس کی کارکردگی  کا جائزہ لیا گیا اجلاس میں وفاقی وزیر قومی صحت سائرہ  افضل تارڑ اور چیئر پرسن عائشہ رضا فاروق  نے وزیر اعظم کو پولیو کے خاتمے کے لئے بریفنگ دی ۔ وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے اجلاس میں کہا کہ  سیاسی قیادت پولیو کے خاتمے کے لئے پر عزم ہے کیونکہ پولیو کے خاتمے میں  ہماری نسلوں کی بقا ہے اور میں خود ملک سے پولیو کے خاتمے کی ذمہ داری لیتا ہوں ۔ انہوں نے انسداد پولیو ٹاسک فورس کا ہنگامی اجلاس بلانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ صوبائی حکومتیں پولیو کی روک تھام کے لئے مربوط کوشش کریں تاکہ اس ملک سے  پولیو کا ہمیشہ ہمیشہ کے لئے خاتمہ کیا جا سکے علاوہ ازیں وزیر اعظم سے فاٹا اراکین اور  مشاہد حسین سید نے وزیر اعظم ہائوس میں ملاقات کی جس دوران وزیر اعظم نے  صحت ، تعلیم اور انفراسٹرکچر مزید بہتر بنانے کیلئے اضافی وسائل استعمال کرنے اور فاٹا کا دورہ کرنے کی یقین دہانی کرائی ، اس موقع پر مشاہد حسین سید نے وزیر اعظم کو سی پیک پارلیمانی کمیٹی کی رپورٹ پیش کی  ۔ 
image

ایم کیو ایم پاکستان اور مسلم لیگ فنکشنل کے بعد پاکستان تحریک انصاف نے بھی سندھ میں نیب قوانین کو ختم کرنے کے بل کو سندھ ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا ۔ تفصیلات کے مطابق  ہائی کورٹ میں خرم شیر زمان اور علی زیدی نے نیب قانون کو چیلنج کر نے کی علیحدہ علیحدہ درخواستیں دائر کر دیں۔ درخواستوں میں میں موقف اختیار کیا گیا کہ پاکستان پیپلز پارٹی نے کرپشن کو چھپانے کے لیے نیب قوانین کو منسوخ کیا اس لیے سندھ اسمبلی کے بل کو کالعدم قرار دے کر نیب قوانین کو بحال کیا جائے۔ نیب آرڈی نینس کو منسوخ کرنا آئین کی خلاف ورزی ہے، حکومت سندھ اپنی کرپشن چھپانا چاہتی ہے۔ 
image